Wednesday, October 5, 2022

دس روز کی چھٹی پر گئے کیڈٹس کو 5دن بعد کیوں بلایا گیا ؟ اسفندیار

دس روز کی چھٹی پر گئے کیڈٹس کو 5دن بعد کیوں بلایا گیا ؟ اسفندیار
کوئٹہ (92نیوز) اسفندیار ولی خان نے داخلی اور خارجہ پالیسی کا ازسرنو جائزہ لینے کا مطالبہ کر دیا۔ ان کا کہنا ہے نقصان ختم نہیں کیا جا سکتا لیکن کم تو ضرور کیا جا سکتا ہے۔ بتایا جائے کیڈٹس کو دس دن کی چھٹی پر گھر بھیجا تو پانچ دن بعد کیوں بلا لیا گیا۔ تفصیلات کے مطابق کوئٹہ میں سربراہ اے این پی اسفندیار ولی نے پارٹی رہنماوں کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا پولیس ٹریننگ کالج پر حملہ بہت دردناک ہے۔ حقیقت میں اس واقعے کی مذمت کےلئے الفاظ نہیں ہیں۔ سانحہ سول ہسپتال اور پولیس ٹریننگ کالج حملہ ہماری نسل کو مٹانے کیلئے ہے۔ انہوں نے کہا سیاست سانحات سے بالاتر ہونی چاہیے۔ بتایا جائے کیڈٹس کو دس دن کی چھٹی پر گھر بھیجا تو پانچ دن بعد کیوں بلا لیا گیا۔ ہم سکیورٹی وجوہات کی بنا پر جلسہ نہیں کر سکتے۔ حفاظتی انتظامات میں کمزوری پر سوالات کے جوابات درکار ہیں۔ اسفند یار ولی نے کہا وزیراعظم سی پیک کے تحت مغربی روٹ بنانے کا وعدہ پورا کریں۔ سی پیک اس ملک اور خطے کےلئے گیم چینجر ہے لیکن گوادر کا مستقبل کیا ہوگا عوام کو جاننے کا حق ہے۔ گوادر جیسے بڑے منصوبوں پر قوم کو اعتماد میں لینا چاہیے۔ انہوں نے کہا سی پیک پر انڈسٹریل یونٹ بنانے کا فیصلہ ہو چکا ہے تو فہرست ہمیں دی جائے۔ گیم چینجر سے محرومیاں دور ہونے کے بجائے بڑھائیں گے تو گیم چینجر کو نقصان ہو گا۔