Monday, September 26, 2022

صحافی اطہر متین کے قتل کے فوری بعد کی ویڈیوز منظرِعام پر آگئیں

صحافی اطہر متین کے قتل کے فوری بعد کی ویڈیوز منظرِعام پر آگئیں
February 20, 2022 ویب ڈیسک

کراچی (92 نیوز) کراچی کے علاقے نارتھ ناظم آباد میں صحافی اطہر متین کے قتل کے فوری بعد کی ویڈیوز منظرِعام پر آگئیں۔

کراچی کے علاقے نارتھ ناظم آباد میں سینئرصحافی اطہر متین کے قتل کے فوری بعد کی ویڈیوز سامنے آگئی ہیں، ویڈیوز میں ڈکیتوں کی جانب سے فائرنگ بھی واضح سنی جا سکتی ہے، فائرنگ کے بعد مقتول اطہر حسین کو گاڑی میں پڑے دیکھا جاسکتا ہے۔

فائرنگ کی آواز سن کر شہری فورا مقتول کی گاڑی کے قریب پہنچتے ہیں۔ ایک شہری کو یہ بھی کہتے سنا جا سکتا ہے کہ یہ ابھی زندہ ہے کوئی اسپتال لے کر جائے، کسی نے ون فائیو ملانے کا کہا تو کوئی ایمبولینس کو فون کرنے کو کہتا سُنا گیا۔

جائے وقوعہ پر کافی دیر تک کوئی پولیس موبائل یا ریسکیو ٹیم نہ پہنچنے پر شہری مقتول اطہر متین کو گاڑی کی پچھلی سیٹ پر لٹاتے ہیں اور ایک شہری مقتول کی گاڑی خود ڈرائیو کرکے اسپتال کی جانب روانہ ہوجاتا ہے۔

اس سے قبل سینئر صحافی اطہر متین کے قتل پر نارتھ ناظم آباد پولیس نے دو نامعلوم افراد کے خلاف مقدمہ درج کرلیا۔ مقدمہ مقتول کے بھائی طارق متین کی مدعیت میں درج کیا گیا۔ مقدمے میں انسدادِ دہشت گردی، قتل اور ڈکیتی کی دفعات شامل ہیں۔

گزشتہ روز مقتول کی نمازِجنازہ میں صدرِمملکت ڈاکٹر عارف علوی، گورنر سندھ عمران اسماعیل سمیت مختلف سیاسی وسماجی شخصیات نے شرکت کی۔ علاقہ مکین اور عزیزواقارب بھی بڑی تعداد میں شریک ہوئے۔ مقتول کا سوئم آج ہوگا۔

اطہر متین کو جمعے کے روز نارتھ ناظم آباد میں فائیو اسٹار چورنگی کے قریب ڈاکوؤں نے فائرنگ کرکے شہید کیا تھا۔