Monday, September 26, 2022

ڈگڈگی بجانے والوں نے ناچ گانے کے علاوہ کوئی کام نہیں کیا: وزیراعظم

ڈگڈگی بجانے والوں نے ناچ گانے کے علاوہ کوئی کام نہیں کیا: وزیراعظم
اسلام آباد (92نیوز) وزیراعظم نوازشریف نے کہا ہے کہ ان کی قیادت میں جب بھی پاکستان ترقی کی راہ پر گامزن ہوتا ہے کوئی نہ کوئی ڈگڈگی بجانے والا سامنے آجاتا ہے لیکن وہ گھبرانے والے نہیں۔ آئندہ خیبرپختونخوا میں بھی مسلم لیگ (ن) کی ہی حکومت ہو گی کیونکہ ڈگڈگی بجانے والوں نے کوئی کام نہیں کیا بلکہ سارا وقت کنٹینر پر کھڑے ہوکر ناچ گانے میں ضائع کر دیا۔ تفصیلات کے مطابق اسلام آباد میں پارٹی انتخابات سے متعلق منعقدہ تقریب میں وزیراعظم اپنے مزاج کے برعکس خاصے پرجوش نظر آئے اور سیاسی حریفوں کے ہر وار کا کھل کر جواب دیا۔ بولے قوم کے ایک ایک پیسے کو امانت سمجھ کر خرچ کیا۔ ڈگڈگی بجانے والے جھوٹ بول کر عوام کو دھوکہ دے رہے ہیں۔ نوازشریف نے خیبرپختونخوا میں تحریک انصاف کی کارکردگی کو بھی سخت تنقید کا نشانہ بنایا اور کہا جب لوگ نیا پاکستان بنانے کے دعویدار کو ڈھونڈ تے ہیں تو وہ انہیں کنٹینر پر کھڑا نظر آتا ہے۔ا للہ نے انہیں خیبرپختونخوا میں موقع دیا لیکن یہ کچھ کر دکھانے کی بجائے کنٹینر پر ناچتے رہے۔ وزیراعظم نوازشریف نے تحریک انصاف کے جلسوں کاذکر کرتے ہوئے کہا انہیں لوگوں کو اکٹھا کرنے کے لیے کئی کئی دن محنت کرنا پڑتی ہے۔ ان کے بلانے سے لوگ نہیں آئیں گے۔ لوگ وہاں جائیں گے جہاں پاکستان کی ترقی ہو۔ وزیر اعظم نے کہا ان کے لیے بڑی سخت باتیں کی جاتی رہیں لیکن انہوں نے سب برداشت کیا اور کبھی جواب نہیں دیا لیکن وہ کسی کو ملکی ترقی کی راہ میں حائل نہیں ہونے دیں گے۔ وزیراعظم نواز شریف نے قوم کو دو ہزار اٹھارہ تک بجلی کی قلت اور لوڈشیڈنگ ختم ہونے کی خوشخبری سنا دی۔ بولے پاکستان بدل رہا ہے‘ یہ اسحاق ڈار نہیں کہتے دنیا کہہ رہی ہے۔ پاکستان سے غربت اور پسماندگی ختم کرنے کے منصوبوں پر کام کر رہے ہیں۔ آج سڑکوں پر ایک ہزار ارب روپے خرچ ہو رہے ہیں۔ انہوں نے کہا جب حکومت سنبھالی تو پاکستان دیوالیہ ہونے والا تھا۔ آج بجلی کے درجنوں کارخانے لگ رہے ہیں۔ دو ہزار اٹھارہ تک بجلی کی قلت اور لوڈ شیڈنگ ختم کردیں گے اور فی یونٹ بجلی سات سے آٹھ روپے سستی ہو جائے گی۔ وزیراعظم کا مزید کہنا تھا کہ دو ہزار تیرہ میں زرمبادلہ کے ذخائر تین ارب ڈالر تھے جو بڑھ کر آج چوبیس ارب ڈالر تک پہنچ چکے ہیں۔ پی آئی اے کو دنیا کی بہترین ایئر لائن بنانے کیلئے دن رات کام کر رہے ہیں۔ پاکستان سے غربت اور پسماندگی ختم کرنے کے منصوبوں پر کام کر رہے ہیں۔ آج دنیا کہہ رہی ہے پاکستان سب سے زیادہ ترقی کرنےوالے ملکوں میں شامل ہو رہا ہے۔ انہوں نے کہا آج سڑکوں پر ایک ہزار ارب روپے خرچ ہو رہے ہیں۔ بلوچستان میں ایک ہزار کلومیٹر سڑکوں پر کام ہو رہا ہے۔ اسلام آباد میٹرو بس کو جنگلا بس کہاجاتا تھا جبکہ اب ان غریبوں سے پوچھو جو چند روپے میں اپنی منزل پر پہنچ جاتے ہیں۔