Monday, October 3, 2022

کراچی : پاکستان کی پہلی روبوٹک سرجری مشین فنڈز نہ ملنے پر بند کر دی گئی

کراچی : پاکستان کی پہلی روبوٹک سرجری مشین فنڈز نہ ملنے پر بند کر دی گئی
کراچی (92نیوز) کراچی کے سندھ گورنمنٹ قطر اسپتال اورنگی ٹاون میں انتیس کروڑ روپے کی لاگت سے لگائی روبوٹک سرجری مشین فنڈز نہ ہونے کی غیرفعال ہو گئی۔ اس مشین سے دو ہزار گیارہ سے چودہ تک 70 کے لگ بھگ پیچیدہ ترین آپریشن کیے گئے۔ تفصیلات کے مطابق پیچیدہ ترین آپریشن نہایت مہارت کے ساتھ یہ کمال تھا روبوٹک سرجری مشین کا۔ دو ہزار گیارہ میں پاکستان کی پہلی مشین سندھ گورنمنٹ قطر اسپتال میں لگائی گئی۔ روبوٹک سرجری مشین امریکہ کی ایجاد ہے جسے عراق جنگ کے دوران استعمال کیا گیا تھا۔ اسے انٹرنیٹ کے ذریعے دنیا میں کہیں سے بھی آپریٹ کیا جا سکتا ہے مگر یہاں ایسی نوبت نہیں آئی۔ اسپتال انتظامیہ کے مطابق دو ہزار چودہ میں حکومت کو بارہا یاددہانی کرائی گئی مگر فنڈز نہ ملے جب تک ممکن ہوا۔ آپریشن جاری رکھے مگر آخرکار روبوٹک سرجری آپریشن بند کرنا پڑے۔ روبوٹک سرجری مشین پر آپریشن میں فی مریض 30 سے 35 ہزار روپے لاگت آتی تھی۔ یہ تمام خرچ حکومت خود برداشت کرتی تھی۔