Friday, March 1, 2024

ایران، حجاب کے معاملے پر مظاہروں کے الزام میں گرفتار مزید 2 نوجوانوں کو پھانسی

ایران، حجاب کے معاملے پر مظاہروں کے الزام میں گرفتار مزید 2 نوجوانوں کو پھانسی
January 7, 2023 ویب ڈیسک

دبئی (92 نیوز) - ایران نے حجاب کے معاملے پر مظاہروں کے الزام میں گرفتار مزید 2 نوجوانوں کو پھانسی دیدی۔ اب تک 14 ہزار افراد گرفتار اور 63 بچوں سمیت 458 افراد ہلاک ہو چکے۔

غیر ملکی میڈیا کے مطابق ایران میں حجاب کے معاملے پر زیر حراست لڑکی مہسا امینی کی موت کے خلاف مظاہروں کے الزام میں گرفتارمزید 2 افراد کو پھانسی دیدی گئی۔

ایرانی عدلیہ نے بھی 2 افراد کو پھانسی دیے جانے کی تصدیق کی ہے جن دو نوجوانوں کو پھانسی دی گئی ہے ان میں ایک کی عمر 22 سال اور دوسرے کی 20 سال ہے۔

یاد رہے کہ ایران میں حجاب کے معاملے پر زیر حراست لڑکی مہسا امینی کی موت کے خلاف ستمبر 2022 سے مظاہرے جاری ہیں۔ مظاہروں کے آغاز کے بعد اب تک کم از کم 14 ہزار کو گرفتار کیا جا چکا ہے اور 63 بچوں سمیت کم از کم 458 افراد ہلاک ہو چکے ہیں۔

ایرانی حکومت کی جانب سے مظاہروں میں شریک دو نوجوانوں کو اس سے قبل بھی سزائے موت بھی دی گئی تھی جن میں سے ایک کی شناخت محسن اور دوسرے کی ماجد رضا کے نام سے ہوئی تھی۔