Monday, May 16, 2022

اسلام آباد سیشن کورٹ میں عثمان مرزا تشدد کیس کی سماعت 19 جنوری تک ملتوی

اسلام آباد سیشن کورٹ میں عثمان مرزا تشدد کیس کی سماعت 19 جنوری تک ملتوی
January 18, 2022 ویب ڈیسک

اسلام آباد (92 نیوز) اسلام آباد سیشن کورٹ میں ای الیون میں عثمان مرزا تشدد کیس کی سماعت 19 جنوری تک ملتوی کر دی گئی۔

ایڈیشنل ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج عطا ربانی نے کیس کی سماعت کی۔ مرکزی ملزم عثمان مرزا سمیت دیگر ملزمان کو پیش کیا گیا۔ لڑکے اور لڑکی کے وکیل ارباب عالم عباسی ایڈووکیٹ نے کہا کہ مجھے ایسا لگتا ہے آپ مجھ سے پرسنل ہو رہے ہیں۔ میں نے غلطی کی وکالت نامہ دیکر اگر آپ کہتے ہیں وکالت نامہ واپس لے لیتا ہوں۔ میرا لڑکا اور لڑکی سے رابطہ ہوا وہ شہر سے باہر ہیں۔ استدعا ہے کہ تاریخ دے دیں آئندہ سماعت پر پیش کر دونگا۔ عدالت نے زیادہ سختی نہیں کر دی آپ نے وارنٹ جاری کرنے ہیں۔

جج نے کہا کہ میں تو وارنٹ گرفتاری جاری کرونگا۔ ایس ایس پی کو لکھونگا لڑکا لڑکی کو پیش کریں۔ تاریخ تو مل جانی ہے لیکن میں طریقہ اپنا اپناونگا۔ آپ کی درخواست آگئی ہے۔ لڑکا اور لڑکی کو عدالتی طریقہ کار پر بلالوں گا۔

وکیل نے کہا کہ آپ مجھ پر الزام لگا رہے ہیں کہ میں کسی اور طریقہ سے پیش ہو رہا ہوں۔ ہم عدالتوں کی عزت کرتے ہیں ۔ جج نے کہا کہ میں توقع کر رہا تھا انہوں نے آج آنا تھا۔ آپ کی استدعا آ گئی بہت شکریہ میں حکم نامہ جاری کر دونگا۔

اس موقع پر وکیل نے ایک سے ڈیڑھ گھنٹے میں متاثرہ لڑکی اور لڑکے کو پیش کرنے کی یقین دہانی کرا دی جس پر عدالت نے سماعت میں وقفہ کر دیا جس کے بعد دوبارہ سماعت شروع ہونے پر وکیل نے ایک بار پھر استدعا کی کہ متاثرہ لڑکا اور لڑکی شہر سے باہر ہیں۔ پہنچنے میں تین گھنٹے لگ جائیں گے۔ عدالت نے آئندہ سماعت پر دونوں کو طلب کرتے ہوئے سماعت 19 جنوری تک کیلئے ملتوی کر دی۔