Saturday, July 2, 2022

انسانی حقوق کمیشن کی سابق سربراہ عاصمہ جہانگیر کی آج چوتھی برسی منائی جارہی ہے

انسانی حقوق کمیشن کی سابق سربراہ عاصمہ جہانگیر کی آج چوتھی برسی منائی جارہی ہے
February 11, 2022 ویب ڈیسک

لاہور (92 نیوز) پاکستان میں آئین اور قانون کی حکمرانی کی بات کرنے والی انسانی حقوق کمیشن کی سابق سربراہ عاصمہ جہانگیرکی آج چوتھی برسی منائی جارہی ہے۔

عاصمہ جہانگیر ستائیس جنوری انیس سو باون کو لاہورمیں پیدا ہوئیں۔ انہوں نے پاکستان میں عورتوں اور اقلیتوں کے حقوق کے لئے کام کیا۔ وہ سپریم کورٹ بار ایسوسی ایشن کی صدر بھی رہیں۔

عاصمہ جہانگیر نے ہمیشہ جمہوریت کی بحالی کیلئے کام کیا اور اداروں کی سیاسی مداخلت پر تنقید کی۔ انہوں نے نظام عدل میں بہتری اور ججز کی شفاف تعیناتیوں پر زور دینے کے ساتھ عدلیہ بحالی تحریک میں بھی فعال کردار ادا کیا۔ انہوں نے اقوام متحدہ کے لیے بطور نمائندہ خصوصی ایران میں انسانی حقوق اور مذہبی آزادی کے حیثیت سے بھی کام کیا۔ ملک کے لیے خدمات کے صلے میں انہیں لکس وومین آف سبسٹانس ایوارڈ، لکس اسٹائل ایوارڈ سے نوازا گیا۔

عاصمہ جہانگیر کو انیس سو پچانوے میں انسانی حقوق پر کام کرنے کی وجہ سے رامون مگسیسی ایوارڈ سے بھی نواز گیا۔ اردن کے رائل اسلامک اسٹریٹجک اسٹڈیز سینٹر کی دوہزار اٹھارہ کی پانچ سو بااثر ترین مسلم شخصیات میں عاصمہ جہانگیر کو سرفہرست قرار دیا گیا۔

گیارہ فروری دو ہزار اٹھارہ کو لاہور میں دل کے دورے کے باعث وہ خالق حقیقی سے جا ملیں۔