Tuesday, August 16, 2022

ان کی طرف سے اجلاس موخر کیے جانے کو کوئی اور رنگ نہ دیا جائے، اٹارنی جنرل اشتر اوصاف

ان کی طرف سے اجلاس موخر کیے جانے کو کوئی اور رنگ نہ دیا جائے، اٹارنی جنرل اشتر اوصاف
July 31, 2022 ویب ڈیسک

اسلام آباد (92 نیوز) - اٹارنی جنرل اشتر اوصاف کا کہنا ہے ان کی طرف سے اجلاس موخر کیے جانے کو کوئی اور رنگ نہ دیا جائے۔

سپریم کورٹ میں ججز کی تقرری کے حوالے سے 28 جولائی کو ہونے والے جوڈیشل کمیشن کے اجلاس کی  ریکارڈنگ جاری کیے جانے کے بعد اٹارنی جنرل اشتر اوصاف کا بیان سامنے آ گیا ۔ اٹارنی جنرل نے خط میں لکھا ہے کہ  ان کی جانب سے اجلاس موخر کیے جانے کو کوئی اور رنگ نہ دیا جائے۔

اٹارنی جنرل کا کہنا تھا کہ انہوں  نے  ان ناموں کی مخالفت کی تھی اور جسٹس ریٹائرڈ سرمد جلال کی رائے سے مکمل اتفاق کیا تھا اور کہا تھا کہ جسٹس اطہر من اللہ ہی اس وقت ہائی کورٹ کے سینئر اور اہل جج ہیں انہیں نامزد ہونا چاہئے۔

اٹارنی جنرل اشتر اوصاف نے خط میں مزید کہا ہے کہ  ججز  کا تقرر کرنا کمیشن کا ایک مقدس ٹرسٹ ہے ۔ اس فرض کی ادائیگی میں کسی قسم کی عدم شفافیت کا شائبہ بھی نہیں ہونا چاہیے ۔ نامزد کیے گیے ججز کی معلومات اجلاس سے بہت پہلے فراہم کی جانی چاہئیں تاکہ ان کا جائزہ لیا جا سکے ۔ انہوں نے   صرف اسی تناظر میں اجلاس موخر کرنے بات کی تھی ۔