Friday, January 27, 2023

وزیر قانون اعظم نذیر تارڑ نے ٹیکنوکریٹ سیٹ اپ کو غیر آئینی قرار دیدیا

وزیر قانون اعظم نذیر تارڑ نے ٹیکنوکریٹ سیٹ اپ کو غیر آئینی قرار دیدیا
December 30, 2022 ویب ڈیسک

اسلام آباد (92 نیوز) - وفاقی وزیر قانون اعظم نذیر تارڑ نے ٹیکنوکریٹ سیٹ اپ کو غیر آئینی قرار دے دیا۔

جمعہ کو اسلام آباد میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ٹیکنوکریٹ حکومت کسی کی خواہش ہوسکتی ہے، لیکن عملی طور پر ایسا ممکن نہیں۔

اعظم نذیر تارڑ نے کہا ہے کہ آئین میں واضح ہے اگر وقت سے پہلے اسمبلیاں جاتی ہے تو 90 جبکہ وقت کے مطابق اسمبلی گئیں تو 60 روز میں الیکشن ہوں گے۔ اسمبلیاں تحلیل ہونے کے بعد نگراں حکومت آئے گی، نگراں حکومت کے علاوہ کوئی گنجائش نہیں۔

وزیرِقانون نے کہا کہ ملک میں لونگ ٹرم نگراں سیٹ اپ اور معاشی ایمرجنسی کی باتیں ہورہی ہیں۔ ملک کی معیشت کے لئے اقدامات آئین کے اندر رہ کر اٹھائے جاسکتے ہیں۔ منتخب حکومت موجود ہے تو اس سے چیلنجز سے نمبردآزما ہوسکتے ہیں۔