Sunday, May 22, 2022

آرٹیکل 63 اے کی تشریح، لارجر بینچ کی تشکیل پر جسٹس قاضی فائز عیسٰی کا تحفظات کا اظہار

آرٹیکل 63 اے کی تشریح، لارجر بینچ کی تشکیل پر جسٹس قاضی فائز عیسٰی کا تحفظات کا اظہار
March 23, 2022 ویب ڈیسک

اسلام آباد (92 نیوز) - آرٹیکل 63 اے کی تشریح کے معاملے میں لارجر بینچ کی تشکیل پر جسٹس قاضی فائز عیسٰی نے تحفظات کا اظہار کر دیا۔ چیف جسٹس آف پاکستان کو خط لکھ کر بینچ کی تشکیل پر سوالات اٹھا دیئے۔

خط میں جسٹس قاضی فائز عیسی نے کہا ہے کہ صدارتی ریفرنس پر پوری قوم کی نظریں ہیں۔ اتنے اہم کیس کیلئے بینچ کی تشکیل سے پہلے کسی سینئر جج سے مشاورت نہیں کی گئی اور نہ ہی رولز کو فالو کیا گیا۔ بینچ میں سینیارٹی پر چوتھے آٹھویں اور تیرہویں نمبر پر موجود ججوں کو شامل کیا گیا جبکہ جہاں اہم قانونی اور آئینی سوالات ہوں وہاں سینئر ججوں کو بینچ میں شامل ہونا چاہیے۔

جسٹس قاضی فائز عیسی نے سول سرونٹ کی بطور رجسٹرار تقرری پر بھی اعتراض اٹھایا۔ انہوں نے موقف اختیار کیا کہ میری رائے میں رجسٹرار کی تقرری خلاف آئین ہے۔ سپریم کورٹ نے بار کی درخواست اور صدارتی ریفرنس ایک ساتھ سماعت کیلئے مقرر کرنے کا حکم دیا تاہم ان دونوں کو ایک ساتھ نہیں سنا جا سکتا۔