Sunday, May 22, 2022

آج عظیم انقلابی شاعر حبیب جالب کا 94 واں یوم پیدائش منایا جا رہا ہے

آج عظیم انقلابی شاعر حبیب جالب کا 94 واں یوم پیدائش منایا جا رہا ہے
March 24, 2022 ویب ڈیسک

لاہور (92 نیوز) - عظیم انقلابی شاعر حبیب جالب کا 94 واں یوم پیدائش آج منایا جا رہا ہے۔

عظیم انقلابی شاعر حبیب جالب نے جو لکھا امر ہو گیا۔ انقلاب کا نعرہ ہی نہیں لگایا، اپنی زندگی کو انقلاب کی عملی تفسیر بنا دیا۔ حبیب جالب 1928 میں پیدا ہوئے ،1947 میں تقسیم ہند پر پاکستان آئے۔ جالب نے آمریت کےخلاف لکھا ، خواتین کےساتھ حدود آرڈنینس کےخلاف سڑکوں پر مظاہرے بھی کئے۔

جالب کو کئی مرتبہ جیل میں سزا بھی کاٹنی پڑی۔ وہ اپنے مقامی انداز کی وجہ سے لوگوں کی توجہ  اپنی جانب مبذول کروا لیتے تھے۔ وہ سرمایہ دارانہ، جاگیردارانہ اور سماجی و اقتصادی نظام کے خلاف بے باکانہ انداز میں آواز بلند کرتے تھے۔

ان کی نظمیں دستور اور مشیر آج بھی اتنی ہی مقبول ہیں جتنی اس وقت تھیں جب انہیں پہلی مرتبہ پڑھا گیا تھا۔ حبیب جالب کی انقلابی شاعری کا اثر انکی اپنی زندگی پر بھی تھا۔ اپنی علالت پر اُس وقت کی وزیراعظم بے نظیر بھٹو سے ایک روپیہ تک لینے سے انکار کر دیا۔

اپنی ترقی پسند شاعری سے لوگوں کے دلوں پر راج کرنے والے حبیب جالب کا باغیانہ سفر انیس سوترانوے میں تکمیل کو پہنچ گیا۔