Thursday, January 27, 2022
براہراست ٹی وی براہراست نشریات(UK) آج کا اخبار English News
English News آج کا اخبار
براہراست ٹی وی براہراست نشریات(UK)

توہین رسالت سے متعلق قانون میں تبدیلی کیس، رپورٹ پیش نہ کرنے پر اسلام آباد ہائیکورٹ برہم

توہین رسالت سے متعلق قانون میں تبدیلی کیس، رپورٹ پیش نہ کرنے پر اسلام آباد ہائیکورٹ برہم
February 12, 2018

اسلام آباد (92 نیوز) اسلام آباد ہائیکورٹ نے توہین رسالت قانون میں تبدیلی سےمتعلق کیس میں کہا کہ اگر 20 فروری تک رپورٹ پیش نہ کی تو وزیر اعظم کو توہین عدالت کا نوٹس دیں گے ۔
اسلام آباد ہائیکورٹ کے جسٹس شوکت عزیز صدیقی نے فیض آباد دھرنا کیس کی سماعت کی ۔
سماعت میں ڈپٹی اٹارنی جنرل راجہ ارشد کیانی اور سیکرٹری دفاع عدالت میں پیش ہوئے ۔
معاہدے میں آرمی چیف کا نام آنے سے متعلق رپورٹ سیکرٹری دفاع کی جانب سے پیش کر دی گئی تاہم راجہ ظفر الحق کمیٹی کی رپورٹ ایک مرتبہ پھر نہ آنے پر عدالت کی جانب سے برہمی کا اظہار کیا گیا ۔
جسٹس شوکت عزیز صدیقی نے ریمارکس دیئے کہ اگر 20 فروری تک رپورٹ جمع نہ ہوئی تو وزیر اعظم سمیت وزراء کو توہین عدالت کا نوٹس جاری کرینگے ۔
عدالت نے کہا کہ کیا یہ چاہتے ہیں کہ چیئرمین سینٹ اور سپیکر قومی اسمبلی سے براہ راست ریکارڈ طلب کرنا پڑے ۔ عدالت کے ساتھ چھپن چھپائی کا کھیل نہ کھیلا جائے ۔
عدالت نے آئندہ سماعت پر رپورٹ طلب کرتے ہوئے کیس کی سماعت 20 فروری تک ملتوی کر دی ۔