Monday, November 28, 2022

گوجرانوالا : خاتون نےکمسن لے پالک بیٹی کو مبینہ طور پر بدترین تشدد کا نشانہ بناڈالا

گوجرانوالا : خاتون نےکمسن لے پالک بیٹی کو مبینہ طور پر بدترین تشدد کا نشانہ بناڈالا
  گوجرانوالا(92نیوز)گوجرانوالہ میں سنگدل خاتون نے تین سال کی لے پالک بیٹی کو مبینہ طورپربدترین تشدد کا نشا نہ بنا ڈالا۔ جسے شدید زخمی حالت میں اسپتال منتقل کر دیا گیا تشدد کی تصدیق ہونے پر پولیس نے  دو افراد کو حراست میں لے لیا۔ تفصیلات کےمطابق گوجرانوالہ میں تشدد کی  بدترین مثال میاں بیوی نے تین سال کی لے پالک بچی  پرظلم کے پہاڑ  توڑ دئیے۔ عالم چوک کے رہائشی محنت کش بشارت کی  بیوی کا  ڈیڑھ سال پہلے انتقال  ہوا جس پر اس کی شیر خوار  بیٹی نور فاطمہ  کو  رشتہ  دار خاتون  شمشاد نے یہ کہہ کر گود لے لیا  کہ وہ یتیم  بچی  کا پورا خیال رکھے گی لیکن بن ماں کی بچی کو وہ پیار نہ مل سکا جس کی وہ  حقدار  تھی اور  اس پر  بری طرح  تشدد کیا جاتا رہا۔ بشارت ہفتے کو شمشاد کے  گھر گیا  تو اس کی آنکھوں کی  ٹھنڈک نورفاطمہ کو تیز بخار تھا اور جسم پر زخموں کے نشا نا ت تھے جس پر وہ بچی کو لے کر ڈسٹرکٹ اسپتال پہنچا  جہاں ڈاکٹرز نے بد ترین تشدد کی تصدیق کردی۔ اسپتال انتظامیہ نے واقعے کی  اطلاع  پولیس کو کر دی  جس پر پولیس نے دو افراد کو حراست میں لے کر تھانے منتقل کر دیا ہے۔