Saturday, February 24, 2024

گوا:گائےکودھکادینےپرغیرملکی خاتون،اسکے2ساتھیوں پرڈنڈوں، جوتوں سےتشدد

گوا:گائےکودھکادینےپرغیرملکی خاتون،اسکے2ساتھیوں پرڈنڈوں، جوتوں سےتشدد
April 17, 2017
گوا(ویب ڈیسک)بھارت میں جنونی ہندو گائے کے معاملے پر روز بروز مزید جذباتی ہورہے ہیں،  گوا میں خود کو بچانے کےلیے گائے کو دھکا دینے پر غیرملکی خاتون اور اس کےدوساتھیوں کو ڈنڈوں اور جوتوں سےتشدد کا نشانہ بناڈالا۔ تفصیلات کےمطابق بھارت میں گائےمحفوظ عورت اور مسلمانوں سمیت تمام اقلیتیں  غیرمحفوظ  ہیں کچھ روز قبل یہ بیان بھارتی اداکارہ و رکن اسمبلی جیابچن نے اسمبلی اجلاس میں دیا تھا۔ جیاکے اس بیان کو گوا کےان جنونی ہندوؤں نےسچ ثابت کردیا سوشل میڈیا پر وائرل ہونے والی ایک ویڈیو میں دیکھا جاسکتا ہے کہ ساحل پرایک گائے غیرملکی سیاح خاتون کے انتہائی قریب آئی تو وہ گھبرا گئی اورگائے کو دھکا دیدیاجس پر وہاں موجود جنونی ہندوؤں نے خاتون کو پیٹنا شروع کر دیا خاتون کو بچانے کیلئے دوافراد آگے بڑھے توجنونیوں نے انہیں بھی نہ بخشا اور ڈنڈے اورجوتے برسا دیئے۔ بھارت میں گائے کے معاملے پر لوگوں پربدترین تشدد معمول ہے،پانچ اپریل کو درجنوں ہندوؤں نے ریاست راجستھان میں  پچپن سالہ مسلمان  پہلو خان کو گائے  لیجاتے ہوئے روک کرتشددکانشانہ بنایا اور  موت کے گھاٹ اتار دیا تھا۔ برطانوی اخبار دی گارڈین کے مطابق گزشتہ دوسالوں میں گائے کے معاملے میں 10افراد کو قتل جبکہ درجنوں کو شدید زخمی  کیا جاچکا ہے۔