Monday, November 28, 2022

گلو بٹ جیل سے رہا ، گھرپہنچنے پرسجدہ شکرادا کیا

گلو بٹ جیل سے رہا ، گھرپہنچنے پرسجدہ شکرادا کیا
لاہور(92نیوز)خبر دار ہوشیار، سانحہ ماڈل ٹاؤں کا مرکزی کردار گلو بٹ جیل سے رہا ہو گیا ۔ گلو بٹ کو عدالت نے  گیارہ برس کی سزا سنائی تھی جس کے بعد سے وہ کوٹ لکھپت جیل میں اپنی زندگی کے دن پورے کر رہا تھا تاہم پھر عدالت نے اُس کی درخواست منظور کی اور دہشت گردی کی دفعات ختم کرتے ہوئے اُسے رہا کرنے کا حکم دے دیا ۔ تفصیلات کےمطابق لمبی مونچھیں اور ہاتھوں میں بڑا سا گنڈاسہ جی ہاں یہ بات اپنے دور کے سلطان راہی کی نہیں بلکہ سانحہ ماڈل ٹاؤں میں کسی بھپرے بھینسے کی طرح کئی گاڑیوں پر ٹوٹ پڑنے والے شاہد عزیز عرف گلو بٹ کی ہو رہی ہے جس نے دیکھتے ہی دیکھتے کئی گاڑیوں کو برباد کر دیا۔ گاڑیوں کے ڈنڈے مار کر تباہ کرنے کی فوٹیج منظر عام پر آنے کے بعد گلو بٹ کے خلاف انسداد دہشت گردی کی دفعات کے تحت مقدمہ درج کرکے  اُسے گرفتار کرلیا گیا ، تاہم گلو بٹ کئی سیاسی رہنماؤں کا بھی تکیہ کلام بن گیا ۔  اکتوبردو ہزار چودہ کو انسداد دہشت گردی  کی عدالت نے گلو بٹ کو گیارہ سال قید اور جرمانے کی سزا سنائی تو گلو بٹ کا مسکن بنا کوٹ لکھپت جیل جہاں موصوف کے ہوش اتنے ٹھکانے آئے کہ رہائی کے بعد چپکے سے گھر پہنچے اور سجدہ شکر ادا کیا۔ نو فروری کولاہور ہائی کورٹ کے جسٹس طارق عباسی کی سربراہی میں دو رکنی بنچ نے گلو بٹ کی انسداد دہشت گردی کی خصوصی عدالت کی سزا کے خلاف اپیل منظور کرتے ہوئے انسداد دہشت گردی قانونی کی دفعات ختم کردیں۔ سزا پوری ہونے کے بعد  گلو بٹ کو کوٹ لکھپت جیل سے رہا کر دیا گیا۔