Sunday, October 2, 2022

گجرات میں مبینہ پولیس تشدد سے جاں بحق ہونیوالے نوجوان کے ورثاء انصاف کے منتظر

گجرات میں مبینہ پولیس تشدد سے جاں بحق ہونیوالے نوجوان کے ورثاء انصاف کے منتظر

گجرات ( 92 نیوز) گجرات میں مبینہ طور پر پولیس تشدد سے 20 سالہ نوجوان جاں بحق ہو گیا ،  پوسٹ مارٹم بھی ہو گیا لیکن غم میں نڈھال اہلخانہ کئی روز گزرنے کے باوجود آج بھی انصاف نہ ملنے کا شکوہ کر رہے ہیں۔

پولیس کے مبینہ تشدد سے جاں بحق ہونے والے نوجوان کا بوڑھا باپ 92 کے پروگرام صبح سویرے پاکستان میں محکمہ پولیس کو کوستا رہا ۔  ایس پی گجرات عمران رزاق نے بتایا کہ سخاوت کو نجی ٹارچر سیل میں نہیں رکھا گیا ، ہلاکت کہ وجہ پوسٹ مارٹم رپورٹ آنے پر پتا چلے گی،لواحقین کی درخواست پر ذمہ داروں کو معطل کر کے مقدمہ درج کر لیا ہے۔

سخاوت کے باپ نے دہائیاں دیتے ہوئے کہا کہ پولیس حکام پیٹی بھائیوں کو بچانے کی کوشش کر رہے ہیں،سخاوت علی کو پولیس اہلکاروں نے موبائل چوری کے شبہ میں چند روز قبل حراست میں لیا تھا۔