Thursday, January 20, 2022
براہراست ٹی وی براہراست نشریات(UK) آج کا اخبار English News
English News آج کا اخبار
براہراست ٹی وی براہراست نشریات(UK)

کراچی ، زہریلا کھانا کھانے سے بچوں کی اموات،والدین نے ذمہ داران کو معاف کردیا

کراچی ، زہریلا کھانا کھانے سے بچوں کی اموات،والدین نے ذمہ داران کو معاف کردیا
January 14, 2019
کراچی ( 92 نیوز) کراچی  میں زہریلا کھانا کھانے سے جاں بحق ہونے والے دوبچوں کے والدین نے ذمہ داروں کو معاف  کردیا۔ وکیل نے عدالت کو بتایا کہ فریقین میں سمجھوتہ ہوگیاہے، عدالت نےکہاکہ سمجھوتے کی نقول  ٹرائل کورٹ  میں پیش کی جائیں۔ سندھ ہائیکورٹ میں کلفٹن میں ریسٹورنٹ کا زہریلا کھانا کھانے سے دومعصوم بھائیوں احمد اور محمد کی موت  کے کیس میں  ملزمان کی ضمانت  بارے سماعت ہوئی ، بچوں کے والدین نے  ذمہ داروں کو معاف کردیا ۔ وکیل نے بتایاکہ بچوں کے والدین اور ہوٹل انتظامیہ میں سمجھوتہ ہوگیاہے۔بچوں کے والدین نے ذمہ داروں کو معاف کردیاہے۔اوروہ ملزمان کے خلا ف کوئی کارروائی نہیں چاہتے۔ عدالت نے کہاسمجھوتے کی نقول ٹرائل کورٹ میں پیش کی جائیں۔ گیارہ نومبر 2018 کوبچوں اوران کی والدہ نے ریسٹورنٹ سے کھاناکھایاتھا ، جس کےچند گھنٹوں بعد دونوں بچے جاں بحق اوروالدہ شدیدبیمارہوگئی تھیں۔ سندھ فوڈ اتھارٹی نے ریسٹورنٹ پرچھاپہ مارکر زائدالمیاد گوشت برآمد کیاتھا،گوشت کے لیبارٹری سے ٹیسٹ بھی کروائے گئے جس میں زہریلے بیکڑیا کی تصدیق ہوئی تھی۔ تحقیقاتی اداروں کی جانب سےنجی ریسٹورنٹ سے چکن تندوری، چکن ونگز، اسٹک فرائز، چاول اور دیگر اشیاء کے نمونے لئے گئے تھے ۔جبکہ نجی ریسٹورنٹ سے 80 کلو گرام سے زائد المیعاد گوشت بھی ملاتھا۔ امیوزمنٹ پارک سے بھی کینڈی فلاز اور دیگر اشیا  کے نمومے حاصل کیے گئے تھے۔ جاں بحق  بچوں کے والدین اور اداروں کی جانب سے اس بات کااندیشہ ظاہرکیا گیا تھاکہ بچوں کی موت مضر صحت کھانے سے ہوئی تھی ۔