Monday, September 26, 2022

ڈرون حملے ہماری ملکی خودمختاری کے خلاف ہیں : آرمی چیف

ڈرون حملے ہماری ملکی خودمختاری کے خلاف ہیں : آرمی چیف
اسلام آباد (92نیوز) آرمی چیف جنرل راحیل شریف کا کہنا ہے ڈرون حملے ہماری ملکی خودمختاری کےخلاف ہیں۔ ڈرون حملے کسی بھی صورت قبول نہیں اور یہ بند ہونے چاہئیں۔ پارلیمنٹ میں میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ یہ سال دہشت گردی کے خاتمے کا سال ہے۔ تفصیلات کے مطابق سپہ سالار نے پارلیمنٹ کے مشترکہ اجلاس میں شرکت کے بعد میڈیا سے غیررسمی گفتگو کے دوران کہا کہ ڈرون حملوں کےلئے بدقسمتی چھوٹا لفظ ہے۔ نوشکی ڈرون حملہ ملکی خود مختاری کےخلاف تھاجس کےخلاف اپنا ردعمل بھی دیا۔ آرمی چیف کا کہنا تھا کہ دہشت گردی کےخلاف جنگ میں ناکامی کا کوئی آپشن نہیں۔ ہم نے یہ جنگ ہر حال میں جیتنی ہے۔ آپریشن ضرب عضب کامیابی کی طرف گامزن ہے۔ اب شرپسندوں کو واپس نہیں آنے دیں گے۔ جنرل راحیل شریف نے پاک چین اقتصادی راہداری منصوبے کو ملک کی ترقی کا اہم باب قرار دیا۔ انہوں نے اس عزم کا اظہار کیا کہ یہ منصوبہ ہر صورت میں مکمل ہو گا اور کسی کو اس میں رکاوٹ نہیں ڈالنے دیں گے۔ سربراہ پاک فوج نے میڈیا کو بتایا کہ شمالی اور جنوبی وزیرستان میں ترقی کا عمل تیزی سے جاری ہے جہاں 56 فیصد متاثرین کی واپسی مکمل ہو چکی ہے جبکہ بلوچستان میں امن وامان کی صورتحال بہت بہتر ہو گئی ہے۔