Saturday, October 1, 2022

ڈاکٹر عمران فاروق قتل کیس کی تفتیش کی ابتدائی رپورٹ تیار

ڈاکٹر عمران فاروق قتل کیس کی تفتیش کی ابتدائی رپورٹ تیار
اسلام آباد(92نیوز)ڈاکٹر عمران فاروق قتل کیس میں ایف آئی اے کاونٹر ٹیررزم ونگ کی تفتیشی ٹیم نے ملزموں سے اب تک ہونے والی تفتیش کی ابتدائی اٹیروگیشن رپورٹ تیار کرلی ابتدائی رپورٹ میں تینوں ملزموں کا دفعہ ایک سوچونسٹھ کا بیان ،آپس میں رابطوں کے لئے استعمال کئے گئے موبائل فون اور ای میلز کی تفصیل شامل ہےدوسری جانب  ایف آئی اے نے  مقدمے میں نامزد ملزم کاشف خان کی تلاش بھی شروع کردی ہے۔ تفصیلات کےمطابق کاونٹر ٹیررزم ونگ کی تفتیشی ٹیم نے  ملزم معظم علی ، خالد شمیم اور محسن علی سید سے اب تک ہونے والی تفتیش کی روشنی مین  ابتدائی انٹروگیشن رپورٹ مرتب کرلی ہے تفتیشی ذرائع کے مطابق انٹروگیشن رپورٹ میں زیر دفعہ ایک سو چونسٹھ کے تحت  ملزموں سے  قلمبند کیے گئے  اعترافی بیان کو انٹروگیشن رپورٹ کا حصہ بنایا گیا ہے جبکہ ملزموں کے آپس میں رابطے کے لئے استعمال ہونے والے موبائل فون کی تفصیل اور ای میلز کو بھی ابتدائی رپورٹ میں شامل کیا گیا ہے ذرائع کاکہنا ہے کہ محسن اور کاشف کو  برطانیہ کے لئےفراہم کئے گئے ائیر ٹکٹ اور ملزموں کی ٹریول ہسٹری بھی رپورٹ میں شامل ہے۔ ملزموں سے برآمد ہونےو الے پاسپورٹ کی فرد مقبوضگی کی رپورٹ بھی انٹروگیشن رپورٹ میں شامل کی گئی ہے تینوں ملزموں کا جسمانی ریمانڈ ختم ہونے پر اٹیروگیشن رپورٹ عدالت میں پیش کی جائے گی ،،ذرائع کے مطابق رپورٹ کو مقدمے کے چالان کا حصہ بھی بنایا جائے گا۔ دوسری جانب ایف آئی اے کاونٹرٹیررزم ونگ نے مقدمے میں نامزد ملزم کاشف خان کامران کی تلاش شروع کردی ہے  ذرائع کے مطابق ایف آئی اے  کی پانچ ٹیمیں ملزم کاشف کی تلاش کے لئے کراچی ، کوئٹہ ،چمن اور حیدر آباد روانہ کردی ہیں تاہم ابھی تک ملزم کی گرفتاری منظر عام پر نہیں آسکی ،،تفتیشی ذرائع کے مطابق عدم گرفتاری کی صورت میں ملزم کاشف کو عدم پتا قرار دے کرعدالت سے اشتہار جاری کروایا جائے گا۔