Monday, October 3, 2022

پی پی کے دور میں نوے ہزار جعلی شناختی کارڈ اورپاسپورٹ تحقیقات کے بعد منسوخ کئے گئے: رحمان ملک

پی پی کے دور میں نوے ہزار جعلی شناختی کارڈ اورپاسپورٹ تحقیقات کے بعد منسوخ کئے گئے: رحمان ملک
کراچی(92نیوز)سابق وزیرداخلہ رحمن ملک نے کہا ہے کہ اُن کے دور میں نوے ہزار جعلی شناختی کارڈ اور پاسپورٹ تحقیقات کے بعد منسوخ کئے گئے۔ افغان مہاجرین کا شناختی کارڈ بننے کا سلسلہ بہت پرانا ہے جو جنرل ضیاء کے دور حکومت سے جا ملتا ہے ۔ اپنے ایک بیان میں اُن کا مزید کہنا تھا کہ وزیر داخلہ یا سیکرٹری داخلہ خود شناختی کارڈ یا پاسپورٹ کا اجراء نہیں کرتا۔ اُن کے دور میں  کسی بھی ولی محمد نامی شخص کے پاس پاکستانی شناختی کارڈ ہونے کی رپورٹ نہیں ملی تھی ورنہ منسوخ کرکے ذمہ داروں کو قرار واقعی سزا دی جاتی۔ ولی محمد کا شناختی کارڈ پہلی بار دو ہزاردو میں جنرل مشرف کے دور میں بنا تھا  اور ہلاک ہونے تک جعلی شناختی کارڈ اور پاسپورٹ اُس کے پاس تھا ۔