Tuesday, December 6, 2022

پنجاب میں اپوزیشن کا غیر ذمہ دارانہ رویہ،مذاکرات کی بجائے ایوان کے باہر دھرنا دیئے رکھا

پنجاب میں  اپوزیشن کا غیر ذمہ دارانہ رویہ،مذاکرات کی بجائے ایوان کے باہر دھرنا دیئے رکھا
لاہور ( 92 نیوز) پنجاب میں اپوزیشن نے غیرذمہ دارانہ رویہ اپنائے رکھا ، مذاکرات کی بجائے پھر ایوان کے باہر دھرنا دے دیا ، اسپیکر نے ایوان میں ہنگامہ آرائی کی تحقیقات کیلئے خصوصی کمیٹی بنا دی ۔ کمیٹی 14 روز میں تحقیقات مکمل کرے گی  ، ادھر سیاسی جماعت کے کارکنوں کی اسمبلی احاطے میں داخلے پر چیف سکیورٹی افسر سردار اکبر ناصر کو معطل کردیا گیا۔ پنجاب اسمبلی کا اجلاس کل گیارہ بجے تک ملتوی کردیا گیا، اسمبلی کے اندر اجلاس کی کارروائی ہوئی تو باہر اپوزیشن نے اپنی اسمبلی لگائے رکھی، اسپیکرپرویزالہٰی کا کہنا ہے کہ  اپوزیشن نے ہاؤس کا تقدس پامال کیا، مسلم لیگ ن نے ایوان کے اندر کی نئی فو ٹیج بھی جاری کر دی ۔ سیاسی جماعت کے کارکنوں کے اسمبلی احاطے میں آنے پر چیف سکیورٹی  افسر کومعطل کردیاگیا۔ پنجاب اسمبلی میں بجٹ اجلاس کے دوران ہنگامہ آرائی پر چھ ارکان کی معطلی کامعاملہ حل نہ ہوسکا ، پنجاب اسمبلی میں  حکومتی ارکان ایوان کی کارروائی میں حصہ  لیتے رہے ، تاہم اسمبلی کی سیڑھیوں پر اپوزیشن ارکان نے سابق سپیکررانااقبال کی زیرصدارت اپنی اسمبلی لگائے رکھی ۔احتجاجی ارکان معطل ارکان کی بحالی اور شہبازشریف کی گرفتاری کے خلاف نعرے لگاتے رہے۔ میڈیا سے بات چیت میں اپوزیشن لیڈرپنجاب اسمبلی حمزہ شہباز نے اسپیکرچودھری پرویزالہٰی کونشانے پررکھ لیا ، بولے چودھری پرویزالہٰی ماضی میں بھی سازشیں کرتے رہے،اب بھی صرف سپیکرنہیں بنے۔ اس سے پہلے سپیکرپنجاب اسمبلی چودھری پرویزالہٰی نےکہا کہ اپوزیشن ارکان نے ہاؤس کاتقدس پامال کیا ہے، مسلم لیگ ن نے اسمبلی میں توڑپھوڑ کی فوٹیج بھی جاری کردی جس  کے مطابق کوئی بنچ ٹوٹانہ گرا۔