Sunday, February 25, 2024

پمز اسپتال کے معاملات میں مداخلت ، فواد حسن فواد اورسیکرٹری کیڈ عدالت طلب

پمز اسپتال کے معاملات میں مداخلت ، فواد حسن فواد اورسیکرٹری کیڈ عدالت طلب
April 23, 2018
اسلام آباد (92 نیوز) سپریم کورٹ نے وزیراعظم کے سیکرٹری فواد حسن فواد اورسیکرٹری کیڈ کو پمز اسپتال کے معاملات میں مداخلت کے معاملے پر طلب کر لیا۔ چیف جسٹس میاں ثاقب نثار کی سربراہی میں 3 رکنی بینچ نے اسلام آباد کے اسپتالوں میں سربراہان کی تعیناتی سے متعلق کیس کی سماعت کی۔ ایڈیشنل اٹارنی جنرل نے بتایا کہ تعیناتیوں کا نوٹیفکیشن جاری کر دیا۔ چیف جسٹس نے استفسار کیا کہ بون میرو، کارڈیک اور بلڈ بینک کا مسئلہ حل ہوا؟؟سرکاری اسپتالوں میں جگر کا ٹرانسپلانٹ کیوں نہیں ہو سکتا جس پر پمز کے سربراہ بولے ڈاکٹرسرکاری تنخواہ کے پیکیج پر آنے کو تیار نہیں۔ چیف جسٹس نے کہا کہ طبی سہولتیں دینا ریاست کا کام ہے، اپنی ضروریات سے آگاہ کریں وزیر اعظم کو بھجوائیں گے، پمز کو بہت اچھا کام کرتے دیکھنا چاہتے ہیں، اسپتال کا فضلہ ٹھکانے لگانے کا بھی بڑا مسئلہ ہے، اسپتال میں امراض دل کا مستقل یونٹ ہونا چاہیے۔ چیف جسٹس نے یہ بھی ریمارکس دیئے کہ پمز میں جنسی ہراساں کرنے کی تحقیقات ایف آئی اے سے کرا لیتے ہیں، لازمی نہیں ہرمرتبہ مرد ہی غلط ہو۔