Friday, February 3, 2023

پب جی گیم کے جال میں الجھے لاہور کے 2 نوجوانوں کی خودکشی

پب جی گیم کے جال میں الجھے لاہور کے 2 نوجوانوں کی خودکشی
لاہور (92 نیوز) اگر آپ کا بچہ، دوست، عزیز یا بھائی پب جی گیم کے جنون میں مبتلا ہے تو خدارا اسے سمجھائیے۔ اسے روکیے۔ کہیں ایسا نہ ہو گیم کھیلنے کا جنون اس کی جان لے جائے۔ پب جی گیم کے جال میں الجھے لاہور کے دو نوجوانوں نے خودکشی کرلی۔ لاہور میں پب جی گیم کے جال میں الجھے لاہور کے دو نوجوانوں کی خودکشی کے واقعات نے ان لوگوں کیلئے خطرے کی گھنٹی بجا دی ہے، جنہوں نے محض یہ گیم تفریح کیلئے شروع کی اور آہستہ آہستہ اس کی لت میں مبتلا ہو گئے۔ گزشتہ ہفتے کے روز شمالی چھاؤنی میں ایف ایس سی کا طالب علم بیس سالہ جونٹی پنکھے سے جھول گیا، ہنجروال کے علاقے مصطفیٰ ٹاؤن میں پب جی کے جنونی سولہ سالہ زکریا یوسف نے بھی پنکھے سے جھول کر زندگی ختم کرلی۔ پب جی کے باعث نوجوانوں میں خود کشی کے واقعات پر قانون ساز بھی میدان میں آگئے،،رکن پنجاب اسمبلی کنول پرویز نے پب جی  پر پابندی کےلیے بل لانے کااعلان کردیا۔ سی سی او لاہور ذوالفقار حمید نے 92 نیوز سے گفتگو میں پُرتشدد گیم بلاک کرنے کے لیے پی ٹی اے کو درخواست کا عندیہ دیا، کہا والدین کی بھی ذمہ داری ہے کہ بچوں پر نظر رکھیں۔ ماہر نفسیات ڈاکٹر عمران کا کہنا تھا کہ والدین اپنے بچوں پر توجہ دیں، اور ان کی کونسلنگ کریں۔ صرف پاکستان ہی نہیں۔پب جی کی بیماری  کا شکار بھارتی نوجوان بھی ہو رہے ہیں۔ سامنے آنے والی ایک ویڈیو میں خاتون بتا رہی ہے کہ کیسے اس کا بھائی گیم میں الجھ کر زندگی کی بازی ہار گیا۔