Friday, January 28, 2022
براہراست ٹی وی براہراست نشریات(UK) آج کا اخبار English News
English News آج کا اخبار
براہراست ٹی وی براہراست نشریات(UK)

پانچ سال میں اسحاق ڈار کےاثاثےنوملین سے بڑھ کر 835 ملین کیسے ہوگئے: سپریم کورٹ

پانچ سال میں اسحاق ڈار کےاثاثےنوملین سے بڑھ کر 835 ملین کیسے ہوگئے: سپریم کورٹ
July 21, 2017

اسلام آباد(92نیوز)پاناما کیس کی سماعت کے دوران عدالت نے وزیر خزانہ سے وکیل سے استفسار کیا کہ پانچ سال میں اسحاق ڈار کے اثاثے نو ملین سے بڑھ کر آٹھ سو سینتیس ملین کیسے ہوگئے؟ اثاثوں کا حساب ہورہا ہے تمام شواہد پیش کرنا ہونگے۔ وزیر خزانہ کے وکیل طارق حسن کا کہنا تھا ان کے موکل طویل عرصے سے تلاشی دےدے کر تھک چکے ہیں۔

تفصیلات کےمطابق وزیرخزانہ اسحاق ڈارکےوکیل طارق حسن نے اپنے دلائل میں کہا کہ وہ اسحاق ڈار کا 34 سال کے ٹیکس ریکارڈساتھ لائے ہیں۔ جےآئی ٹی نےاسحاق ڈارکا ٹیکس ریکارڈ تسلیم نہ کرکےبدنیتی کا اظہارکیا۔ جسٹس اعجاز افضل نے ریمارکس دیئےکہ حدیبیہ پیپر ملزکیس میں تو اسحاق ڈارکےخلاف کافی مواد ہے،جسٹس اعجازالاحسن نےاستفسارکیا کہ اسحاق ڈارکےاثاثے پانچ سال میں 9 ملین سےبڑھ کر 837 ملین  کیسے ہوگئے۔ انہوں نےکہا کہ شیخ نہیان سےملنےوالی تنخواہ کا ریکارڈ بھی چاہیے۔ آپ کے اثاثوں کا حساب ہورہا ہے،تمام شواہد پیش کرنا ہونگے۔ جسٹس اعجازافضل نے کہا کہ آپ نےاسحاق ڈارکےاثاثوں سے متعلق کوئی ریکارڈ نہیں دیاآپ نےحدیبہ پیپرملزکیس کودوبارہ نہ کھولنےکا مطالبہ کیا جسٹس اعجازالاحسن نے ریمارکس میں کہا کہ یہ سارا ریکارڈ ٹی وی کی زینت بنا رہے گا۔

طارق حسن نے اپنے دلائل میں مزید کہا کہ اسحاق ڈار لمبے عرصے سے تلاشی دے دے کر تھک چکے ہیں، بلاوجہ احتساب عدالت میں گھسیٹنا قبول نہیں۔ انہوں نے کہا کہ اسحاق ڈار پروفیشنل اکاؤنٹنٹ ہیں اس لیے عرب حکمرانوں کے مشیربھی مقرر ہوئے۔ ان کا کہنا تھا کہ عدالت آڈٹ کیلئے انٹرنیشنل آڈیٹرز کی خدمات حاصل کرے۔۔جس پر جسٹس اعجازافضل نےکہا کہ آپ چاہتے ہیں یہ کیس چلتا رہے؟  جسٹس اعجازافضل نے ریمارکس میں کہا کہ قانون کےدائرے میں مخالف سمت تیرنا پڑتا ہے۔ آپ کا نکتہ یہ تھا کہ جے آئی ٹی نےمینڈیٹ سے تجاوز کیا۔جسٹس عظمت سعید ریمارکس دیئے کہ جےآئی ٹی کی فائنڈنگ سے زیادہ اہم شواہد ہیں۔