Thursday, October 6, 2022

پاناما لیکس : تحقیقات کا آغاز کس سے ہوگا کمیٹی کے ممبران متفق نہ ہوسکے

پاناما لیکس : تحقیقات کا آغاز کس سے ہوگا کمیٹی کے ممبران متفق نہ ہوسکے
اسلام آباد(92نیوز)پاناما انکشافات کی تحقیقات کیسے ہوں؟ حکومت اور اپوزیشن میں اتفاق ہوگیا لیکن تحقیقات کا آغازکس سے ہوگا؟ اس پراختلافات کی خلیج  کم نہیں ہوئی ،اپوزیشن نے الزام لگایا ہے کہ حکومت تحقیقات نہیں صرف حجت ا تمام کرنا چاہتی ہے۔ تفصیلات کےمطابق پانامہ انکشافات پر تحقیقات کے لئے قائم پارلیمانی ٹی اوآرز کمیٹی کےاجلاس میں حکومت اور اپوزیشن نے اس بات پر تو اتفاق کر لیا کہ آف شور کمپنیوں، قرضوں کی معافی، کک بیکس وصولی اور مالی بدعنوانیوں کی تحقیقات ہوں گی لیکن تحقیقات کا آغاز کس سے ہو گا اس پر شدید اختلافات موجود ہیں، اعتزاز احسن کا کہنا تھا کہ وزیراعظم کا نام  نکال بھی دیں بچوں کی وجہ سے تو نام آئے گا۔  شاہ محمود قریشی  کہتے ہیں کہ انہوں نے ہر سوال قانون شکنی پر اٹھایا، اپوزیشن تحقیقات کا نتیجہ جبکہ حکومت صرف حجت اتمام کرنا چاهتی هے۔ خواجہ سعد رفیق کا کہنا تھا کہ ابتدائیے کی حد تک اتفاق ہوا ہے، سوالات پر دوسرے مرحلے میں  بات ہوگی، حکومتی ٹی او آرز کو سپریم کورٹ نے مستردنہیں کیا، جس جس کی آف شور کمپنیاں ہونگی سب کا ذکر خیر آئے گا۔ اپوزیشن اراکین کا کہنا تھا کہ حکومت نے تسلیم کر لیا کہ انکی طرف سے بھی چھ ممبران ہونگے ، ان ممبران کا فیصلہ وزیراعظم کرینگے۔