Friday, February 23, 2024

وزیر اعظم سے ایئر چیف مارشل مجاہد انور خان کی الوداعی ملاقات

وزیر اعظم سے ایئر چیف مارشل مجاہد انور خان کی الوداعی ملاقات
March 18, 2021

اسلام آباد ( 92 نیوز) وزیراعظم سے ایئرچیف مارشل مجاہد انور خان نے الوداعی ملاقات کی ۔وزیراعظم عمران خان نے ایئر چیف کی ملک اور قوم کےلئے خدمات کی تعریف کی، عمران خان نے مجاہد انور خان کیلئے نیک خواہشات کا اظہار بھی کیا۔

پاک فضائیہ کے سربراہ ایئر چیف مارشل مجاہد انورخان آج اپنی مدت ملازمت پوری کرکے عہدہ سے سبکدوش ہو رہے ہیں۔

چیف آف ایئر سٹاف ایئر چیف مارشل مجاہد انور خان نشان امتیاز ملٹری 1983ء میں پاک فضائیہ میں فائٹر پائلٹ کی حیثیت سے شمولیت اختیار کی تھی۔ انہوں نے ایک فائٹر سکوارڈن کی قیادت کی اور بیس کمانڈر پی اے ایف شہباز، بیس کمانڈر پی اے ایف مصحف، ایئر آفیسر کمانڈنگ اور سینٹرل ریجنل ایئر کمانڈ جبکہ ڈپٹی چیف آف ایئر سٹاف (سپورٹ) اور ڈپٹی چیف آف ایئر سٹاف (آپریشنز) کی حیثیت سے بھی خدمات سرانجام دیں ۔

ایئر چیف مارشل مجاہد انور خان کامبیٹ کمانڈرز سکولز، کمانڈ اینڈ سٹاف کالج اردن اور نیشنل ڈیفنس یونیورسٹی اسلام آباد سے گریجویٹ ہیں۔ انہوں نے وار سٹڈیز اینڈ ڈیفنس مینجمنٹ میں ماسٹرز کی ڈگری حاصل کی۔ ایئر چیف مارشل مجاہد انور خان کو جمہوریہ ترکی کی حکومت کی جانب سے ''دی لیجن آف میرٹ میڈل'' سے نوازا گیا ہے۔

بھارتی جنگی طیاروں کی جانب سے 26 فروری 2019 کو پاکستان کی فضائی حدود کی خلاف ورزی کے جواب میں 27 فروری 2019ء کو ایئر چیف مارشل مجاہد انور خان کی قیادت میں آپریشن ''سوئفٹ ریٹورٹ'' کیا گیا۔

 انہوں نے تمام آپریشن کی منصوبہ بندی اور عملدرآمد میں ویژنری کردار ادا کیا۔ پاکستان ایئر فورس کے کامیاب ردعمل نے خطہ میں تزویراتی برتری کو برقرار رکھنے میں ہمارے روایتی ڈیٹرنس کی ساکھ کو ثابت کیا۔ ایئر چیف مارشل مجاہد انور خان کی پیشہ وارانہ خدمات اور آپریشن سوئفٹ ریٹورٹ میں پاکستان کے عوام کے حوصلے بلند کرنے میں ان کے کردار کے اعتراف میں صدر مملکت نے انہیں نشان امتیاز سول سے نوازا۔