Thursday, September 29, 2022

وزیراعظم سے پہلے وزیراعلیٰ پنجاب کا بجٹ پر ریموٹ کنٹرول اجلاس

وزیراعظم سے پہلے وزیراعلیٰ پنجاب کا بجٹ پر ریموٹ کنٹرول اجلاس
لاہور (92نیوز) وزیراعلیٰ پنجاب نے لندن سے تین گھنٹے طویل ویڈیو کانفرنس کے ذریعے اجلاس کی صدارت کی اور آئندہ مالی سال کے بجٹ اور سالانہ ترقیاتی پروگرام کے خدوخال کا جائزہ لیا۔ نئے مالی سال کے دوران تعلیم کا بجٹ ساٹھ فیصد بڑھانے کی تجویز پر بھی غور کیا گیا۔ شہباز شریف نے دوہزار اٹھارہ میں ملک سے اندھیرے چھٹ جانے کی نوید بھی سنائی۔ تفصیلات کے مطابق وزیراعلیٰ شہباز شریف نے ویڈیو لنک کے ذریعے پنجاب کابینہ کے بجٹ اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کہا کہ ان کا ہر قدم عوام کی خوشحالی کے لیے اٹھ رہا ہے۔ دوہزار اٹھارہ میں ملک سے اندھیرے چھٹ جائیں گے۔ اجلاس میں بجٹ کی تجاویز پر بھی غوروخوض کیا گیا۔ تعلیم کے لیے چوراسی ارب چھپن کروڑ تیس لاکھ روپے جبکہ صحت کے لیے بائیس فیصد بڑھا کر سینتیس ارب تینتیس کروڑ سات لاکھ مختص کرنے کی تجویز پر غور کیا گیا۔ محکمہ آبپاشی کے لیے 7 فیصد اضافے کے ساتھ 38 ارب اور مواصلات و تعمیرات کے لیے 23 فیصد اضافے کے ساتھ 96 ارب 50 کروڑ جبکہ ہاوسنگ اینڈ ڈویلپمنٹ اور پبلک ہیلتھ کے لیے بجٹ 78 فیصد بڑھا کر 72 ارب 20 کروڑ کرنے کی تجویزبھی پیش کی گئی۔ وزیراعلیٰ پنجاب شہبازشریف نے کہا کہ شفافیت، معیار اور رفتار حکومت پنجاب کا طرہ امتیاز ہے جبکہ صوبے کی تیز رفتار ترقی اور عوام کو بنیادی سہولتوں کی فراہمی ان کی اولین ترجیح ہے۔