Tuesday, November 30, 2021
English News آج کا اخبار براہراست نشریات(UK) براہراست ٹی وی
English News آج کا اخبار
براہراست نشریات(UK) براہراست ٹی وی

نورمقدم قتل کیس، مرکزی ملزم ظاہر جعفر کے جوڈیشل ریمانڈ میں مزید 14 روزہ توسیع

نورمقدم قتل کیس، مرکزی ملزم ظاہر جعفر کے جوڈیشل ریمانڈ میں مزید 14 روزہ توسیع
August 16, 2021 --- ویب ڈیسک

اسلام آباد (92 نیوز) نورمقدم قتل کیس کے مرکزی ملزم ظاہر جعفر کے جوڈیشل ریمانڈ میں مزید 14 روز کی توسیع کردی گئی۔ عدالت نے 30 اگست کو دوبارہ پیش کرنے کا حکم دے دیا۔ تھراپی ورکس کے سی ای او ڈاکٹر طاہر ظہور سمیت 6 ملزمان کو بھی جوڈیشل ریمانڈ پر اڈیالہ جیل بھیج دیا گیا۔

جوڈیشل مجسٹریٹ ثاقب جواد نے نور مقدم قتل کیس کی سماعت کی۔ مرکزی ملزم ظاہر جعفر کی روبکار کی بنیاد پر حاضری لگائی گئی۔ ملزم ظاہر جعفر کو بخشی خانے میں رکھا گیا تاہم عدالت میں پیش نہ کیا گیا۔

نور مقدم کے والد نے میڈیا سے غیر رسمی گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ابھی تک کیس کی کارروائی سے مطمئن ہوں۔ ڈیوٹی جج نے مرکزی ملزم ظاہر ذاکر جعفر کے دو ملازمین کا ڈی این اے کرانے کی درخواست منظور کرلی۔

دوسری جانب تھراپی ورکس کے سی ای او طاہر ظہورکے وکیل نے مؤکل کا نام مقدمے سے ڈسچارج کرنے کی استدعا کرتے ہوئے کہا کہ اگر ہم حقائق چھپاتے تو ہمارا ایک بندہ زخمی کیوں ہوتا۔ کسی بندے کا ایک ضمنی میں نام آ جانے سے وہ ملزم نہیں بن جاتا۔ کیس میں طاہر ظہور کا کردار ہو تو بھی قابل ضمانت جرم ہے اور اس میں جیل نہیں بھیجا جا سکتا۔

جج نے ریمارکس دئیے کہ جو وقوعہ تھا وہ ڈاکٹر طاہر ظہور تک بھی تو پہنچایا گیا ہو گا۔ سرکاری وکیل نے اعتراض کرتے ہوئے بتایا کہ ملزم ظاہر کے والد نے ڈاکٹر طاہر ظہور سے رابطہ کیا۔