Friday, February 3, 2023

نواز شریف کی طبی بنیادوں پر دائر درخواست ضمانت کی سماعت دو ہفتوں کیلئے ملتوی

نواز شریف کی طبی بنیادوں پر دائر درخواست ضمانت کی سماعت دو ہفتوں کیلئے ملتوی
اسلام آباد (92 نیوز)اسلام آباد ہائیکورٹ میں نواز شریف کی جانب سے طبی بنیادوں پر  دائر درخواست کی سماعت د وہفتوں کے لئے ملتوی کر دی گئی ۔ اسلام آباد ہائیکورٹ میں نواز شریف کی جانب سے طبی بنیادوں پر دائر درخواست ضمانت کی سماعت ہوئی ، عدالت نے کوٹ لکھپت جیل کے سپرنٹنڈنٹ کو  نوٹس جاری کیا جبکہ نیب سے بھی جواب طلب کیا۔ گزشتہ روز  نواز شریف نے  اسلام آباد ہائیکورٹ سے بیرون ملک  علاج کیلئے رجوع  کیا تھا، درخواست میں موقف اپنایا گیا کہ علاج ممکن ہے تو صرف بیرون ملک میں ، درخواست کیساتھ غیر ملکی ڈاکٹرز کی رائے اور میڈیکل بورڈ کی رپورٹ بھی لف کی گئیں۔ نواز شریف کے وکیل خواجہ حارث نے موقف اپنایا کہ انکے موکل دل کی شریانوں کے عارضے میں مبتلا ہیں، ان کا علاج ممکن ہے تو صرف بیرون ملک  میں ۔ درخواست میں بتایا گیا کہ چھ ہفتے کی ضمانت کے دوران ٹیسٹ بھی جان لیوا مرض کو ظاہر کررہے ہیں ، شریانوں کے عارضے کے سبب ہارٹ اٹیک کا خدشہ بھی ظاہر کردیا۔ درخواست میں واضح کیا گیا ہے کہ پاکستان اور بیرون ملک کے تمام ڈاکٹرز متفق ہیں کہ جیل میں نواز شریف کا علاج ممکن نہیں ، نوازشریف چاہتے ہیں ان کا علاج بیرون ملک انہی ڈاکٹرز سے کرایا جائے جن سے وہ مطمئن ہیں۔ نوازشریف نے اپنی درخواست میں موقف اختیار کیا کہ سیاسی مخالفین پروپیگنڈہ کر رہے ہیں کہ بیرون ملک علاج این آر او لینے کی کوشش ہے ،  سزا معطلی کی درخواست کو این آر او کہنا توہین عدالت کے زمرے میں آتا ہے، اگر سزا معطل کی گئی تو اس سے پراسیکیوشن کے کیس پر کوئی فرق نہیں پڑے گا۔