Sunday, December 5, 2021
English News آج کا اخبار براہراست نشریات(UK) براہراست ٹی وی
English News آج کا اخبار
براہراست نشریات(UK) براہراست ٹی وی

نقیب اللہ قتل کیس میں فیصلہ کن موڑ، راؤ انوار کیخلاف ٹیم سمیت مقدمہ درج

نقیب اللہ قتل کیس میں فیصلہ کن موڑ، راؤ انوار کیخلاف ٹیم سمیت مقدمہ درج
January 23, 2018

کراچی ( 92 نیوز ) نقیب اللہ قتل کیس میں فیصلہ کن موڑ آگیا ۔ راؤ انوار کیخلاف پوری ٹیم سمیت مقدمہ درج کرلیا گیا ۔ مقدمے میں قتل اور انسداد دہشت گردی کی دفعات شامل کرلی گئیں جبکہ نقیب کے ساتھ حراست میں لئے جانے والے 2 نوجوانوں نے بھی اپنا بیان قلمبند کرادیا۔ ادھر ایڈیشنل آئی جی ثنا اللہ عباسی نے نقیب کے والد سے ملاقات میں انصاف کی یقین دہانی کرادی۔
ڈیوٹی افسر نے سہراب گوٹھ جاکر نقیب کے والد کی مدعیت میں مقدمہ درج کیا جس میں راؤ انوار اور ان کی ٹیم کو نامزد کیا گیا ہے ۔ مقدمے میں قتل اور انسداد دہشت گردی کی دفعات شامل کی گئی ہیں۔
ادھر تحقیقاتی کمیٹی نے نقیب کے ساتھ حراست میں لئے جانے والے نوجوانوں قاسم اور حضرت علی کے بیانات بھی قلمبند کرلئے ہیں ۔ نوجوانوں نے بیان دیا کہ ہمیں کچھ روز بعد مبینہ طور پر رشوت وصولی کے بعد چھوڑ دیا گیا تھا تاہم نقیب کو رہا نہیں کیا گیا تھا ۔
دوسری جانب تحقیقاتی کمیٹی نے سہراب گوٹھ میں نقیب اللہ کے والد و جرگہ ارکان سے ملاقات کی، ایڈیشنل آئی جی ثنا اللہ عباسی نے کہا کہ جو بھی ہوگا، سب کو نظر آئے گا، تبصرہ نہیں کرسکتا۔
ان کا کہنا تھا کہ پولیس بری نہیں، چند کالی بھیڑوں کی وجہ سے پولیس آپریشن بدنام ہوا۔
دوسری جانب سابق ایس ایس پی ملیر راؤ انوار کی جعلی این او سی پر ملک سے فرار کی کوشش ناکام ہو گئی ۔ سپریم کورٹ کی ہدایت پر راؤ انوار کا نام ای سی ایل میں ڈال دیا گیا ۔ عدالت نے 27 جنوری کو پیش ہونے کا حکم بھی دے دیا ۔
منگل کی صبح راؤ انوارغیر ملکی ائیر لائن کی پروازسے دبئی روانگی کے لئے اسلام آباد ائیر پورٹ پہنچے ۔ پہلے پروٹوکول افسر کے ذریعے بورڈنگ پاس ایشو کرایا پھرپاسپورٹ اور این او سی لے کر امیگریشن کاونٹر پہنچے۔
این او سی مشکوک ہونے پر راؤ انوار کو پرواز میں سوار ہونے سے روک دیا گیا ۔ جہاز میں سوار ہونے کی اجازات نہ ملی تو راؤ انوار ائیر پورٹ سے واپس روانہ ہو گئے۔
دوسری جانب سے سندھ حکومت نے بھی راؤ انوار کی بیرون ملک چھٹی کی این او سی کو جعلی قرار دے دیا ۔
راو انوار کا کہنا تھا کہ وہ کراچی میں موجود ہیں اور بیرون ملک جانے کی کوشش نہیں کی
، پاسپورٹ اور دیگر دستاویزات سامنے آنے پر سارا پول کھل گیا۔
سپریم کورٹ کے احکامات پر وزارت داخلہ نے راؤ انوار کا نام ای سی ایل مٰں شامل کر دیا ۔ سپریم کورٹ نے راؤ انوار کو 27 جنوری کو بذات خود عدالت کے سامنے پیش ہونے کا بھی حکم دے دیا ۔