Thursday, January 20, 2022
براہراست ٹی وی براہراست نشریات(UK) آج کا اخبار English News
English News آج کا اخبار
براہراست ٹی وی براہراست نشریات(UK)

نااہلی کے بعد بھی نوازشریف نےوزیراعظم ہاؤس کو سیاسی سرگرمیوں کا گڑھ بنارکھا ہے

نااہلی کے بعد بھی نوازشریف نےوزیراعظم ہاؤس کو سیاسی سرگرمیوں  کا گڑھ بنارکھا ہے
July 29, 2017

اسلام آباد(92نیوز)کرسی  تو چلی گئی لیکن وزیراعظم ہاؤس چھوڑنے کو جی نہیں چاہ رہا نوازشریف نااہلی کے سپریم کورٹ کے فیصلے کے بعد بھی وزیراعظم ہاؤس میں ہی بیٹھے ہیں، اور سیاسی سرگرمیوں کا گڑھ وزیراعظم ہاؤس کو بنا رکھا ہےعدالتی فیصلے کے بعد لاہور میں جاتی امرا سے سکیورٹی کی واپسی کا فیصلہ ابھی تک نہیں ہوسکا۔

تفصیلات کےمطابق وزارت عظمیٰ جاتی رہی لیکن پروٹوکول چھوڑنا مشکل ہوگیا نوازشریف کو فوری عہدہ چھوڑنے کا عدالت عظمیٰ کا حکم تو آ گیالیکن وزیراعظم ہاؤس سے نکلنے کو نہ تو ان کا دل مان رہا ہے اور نہ جاتی امرا  لاہور سے وزیراعظم ہاؤس کا درجہ ختم ہونے کے باوجود سکیورٹی اہلکاروں کی واپسی کا فیصلہ ہو سکا ہے۔ سپریم کورٹ کے فیصلے باوجود بھی نوازشریف نے ابھی تک اسلام آباد میں وزیراعظم کی سرکاری رہائشگاہ کو پارٹی کا دفتر بنا رکھاہےجہاں تمام تر سیاسی سرگرمیاں جاری ہیں۔ مسلم لیگ ن کے سارے مشاورتی اجلاس نوازشریف کی زیرصدارت وزیراعظم ہاؤس میں ہو رہے ہیں۔

یہی نہیں بلکہ لاہورمیں نوازشریف کی رائے ونڈ میں جاتی امرا کی رہائش گاہ سے سکیورٹی ہٹانے کے معاملےپر بھی پولیس افسرگومگوکی کیفیت سے دوچارہیں۔سکیورٹی پر مامور افسران اور اہلکاروں کی واپسی کافیصلہ ابھی  تک نہیں نہیں ہو سکا جاتی امرا کی سکیورٹی کیلئے ایک الگ ونگ قائم کیا گیا تھاجس میں ایک ایس ایس پی ،دو ایس پیز،نو ڈی ایس پیز اورگیارہ انسپکٹرز شامل  ہیں۔ ونگ میں ایک سودو سب انسپکٹرز،چوراسی اے ایس آئز اورتین ہزار اہلکار تعینات ہیں ایلیٹ فورس کے بھی تقریباً چارسو کمانڈوز جاتی عمرہ کی حفاظت پر مامور ہیں۔