Thursday, October 6, 2022

مہنگائی ڈرون تیار‘ بجٹ میں 400 سے زائد اشیاءپر ٹیکس بڑھانے کا فیصلہ

مہنگائی ڈرون تیار‘ بجٹ میں 400 سے زائد اشیاءپر ٹیکس بڑھانے کا فیصلہ
اسلام آباد (92نیوز) آئندہ بجٹ میں عوام پر مہنگائی کا بم گرانے کی تیاری مکمل کر لی گئی۔ چار سو سے زائد اشیا پر کسٹمز ڈیوٹی کی شرح بڑھانے کا فیصلہ، امپورٹڈ اشیا‘ کھانے پینے، کپڑے اور جوتے پہننے پر جیب ہلکی کرنی پڑے گی۔ تفصیلات کے مطابق ایف بی آر نے اگلے بجٹ میں پہلے سے ٹیکسوں کے بوجھ تلے دبے عوام پر مزید ٹیکس لگانے کی تجاویز تیار کر لی ہیں۔ اگلے بجٹ میں چار سو سے زائد اشیا پر کسٹمز ڈیوٹی کی شرح بڑھانے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ درآمدی چکن، فروزن مچھلی اور گوشت ، کوکونٹس، کوکا پیسٹ، کوکا پاوڈر اور پائن ایپلز پر کسٹمز ڈیوٹی کی شرح 10 سے بڑھا کر 11 فیصد کرنے کی سفارش کی گئی ہے۔ بجٹ میں پائن ایپلز، ناشپاتی، چیریز، اسٹرابیریز اورآڑو پر کسٹمز ڈیوٹی کی شرح بڑھا دی جائے گی۔ کافی اور چائے بھی ایک فیصد مہنگی ہوجائے گی۔ کاٹن یارن، فیبرکس اور امپورٹڈ جوتوں پرکسٹمز ڈیوٹی میں اضافہ کردیا جائے گا۔ سونا تو غریب عوام کی پہنچ سے دور ہوگیا اب مصنوعی جیولری بھی مہنگی کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ درآمدی سوٹ کیس، بیوٹی بکس، بریف کیس، ٹریویلنگ بیگز، پرس، ہینڈ بیگز، اور لیدر مصنوعات بھی مہنگی کرنے کی سفارش کی گئی ہے۔ کوکنگ رینجز، بچوں کی ویڈیو گیمزاور ایکسر سائز مشینوں کی قیمت بھی ایک فیصد بڑھانے کا فیصلہ کیا جا رہا ہے۔ نئے بجٹ میں حکومت نے امپورٹڈ مصنوعی جیولری پر اضافی ٹیکسز لگانے کا فیصلہ کیا ہے جس سے خواتین سے مصنوعی زیور پہننے کا حق بھی چھین لیا جائے گا۔