Friday, January 28, 2022
براہراست ٹی وی براہراست نشریات(UK) آج کا اخبار English News
English News آج کا اخبار
براہراست ٹی وی براہراست نشریات(UK)

ممتاز شاعرہ پروین شاکر کو مداحوں سے بچھڑے 23 برس بیت گئے

ممتاز شاعرہ پروین شاکر کو مداحوں سے بچھڑے 23 برس بیت گئے
December 26, 2016

اسلام آباد (92نیوز) ممتاز شاعرہ پروین شاکر کو ہم سے بچھڑے 23 برس بیت گئے ہیں لیکن ان کی شاعری اور ان کے الفاظ اب بھی پرستاروں کے دلوں میں نقش ہیں۔ تفصیلات کے مطابق ممتاز شاعرہ پروین شاکر 24 نومبر 1954 کو کراچی میں پیدا ہوئیں۔ انگزیزی ادب میں جامع کراچی سے ایم اے کی ڈگری حاصل کرنے کے بعد کچھ عرصہ درس وتدریس کے ساتھ وابستہ رہیں۔ بعد میں انہوں نے سرکاری ملازمت اختیار کر لی۔

پہلا شعری مجموعہ ’’خوشبو‘‘ ایک نوجوان دوشیزہ کے شوخ و شنگ جذبات کا ایک خوبصورت اظہار ہے۔ پروین شاکر کا بیشتر کلام احمد ندیم قاسمی کے ادبی رسالے فنون میں شائع ہوتا رہا، ان کی شادی نبھ نہ سکی تو طلاق لے لی۔ ماں کے جذبات، شوہر سے ناچاقی اور علیحدگی سب کو انہوں نے خوبصورتی سے بیان کیا ہے۔

زندگی کے سنگلاخ راستوں کا احساس اور اس کا اظہار ان کی بعد کی شاعری میں بار بار ملتا ہے۔ پروین شاکر کی شاعری کا موضوع عورت اور محبت رہا جس میں قوس قزح کے ساتوں رنگ بکھرے نظر آتے ہیں۔ خوشبو، صدبرگ، خودکلامی، انکار، ماہ تمام ان کی تصنیفات ہیں۔ پروین شاکر 26 دسمبر 1994 کو اسلام آباد میں کار کے حادثے میں صرف 42 سال کی عمر میں مالک حقیقی سے جا ملیں۔

 

مر بھی جاؤں تو کہاں لوگ بھلا ہی دیں گے

لفظ میرے، مرے ہونے کی گواہی دیں گے۔