Saturday, October 1, 2022

ملتان ، درندہ صفت نے والد سے لڑائی کی رنجش پر 9سالہ بچہ قتل کردیا

ملتان ، درندہ صفت نے والد سے لڑائی کی رنجش پر 9سالہ بچہ قتل کردیا
ملتان( 92 نیوز) ملتان میں بربریت کا ایک اور واقعہ سامنے آگیا، والد سے لڑائی کا بدلہ ظالم شخص نے 9 سالہ معصوم بچے سے لیا ، ملزم نے دوسری جماعت کے طالب علم  حذیفہ کو مبینہ طور پر زیادتی کے بعد بےدردی سے قتل کردیا، لاش نہر سے مل گئی۔ ملتان کے نواحی علاقے مظفرآباد کے محنت کش کا 9 سالہ لاڈلا بیٹا حذیفہ دو روز قبل گھر سے کھیلنےکے لئے نکلا پھر واپس نہ آیا،باپ سے جھگڑا ہونے پر  سفاک ملزم نے بچے کوبے دردی سے قتل کر کے لاش بوری میں بند کر کے نہر میں پھینک دی ۔ نو سالہ حذیفہ کے  اغواء ہونے پر شک کی بنا پر پولیس تھانہ مظفرآباد نے حکیم یزدانی نامی شخص کو حراست میں لیا، دوران تفتیش گرفتار ملزم نے پولیس کو بتایا کہ 9 سالہ حذیفہ کے والد ندیم سے اسکا جھگڑا ہوا تھا، اس نے باپ کا بدلہ بیٹے سے لیا ۔ ایس ایچ او تھانہ مظفرآباد کے مطابق ملزم نے مبینہ طور پر زیادتی کے بعد گلا دبا کرمعصوم بچے کو قتل کر دیا اور لاش نہر میں پھینک دی۔ قتل ہونے والا 9 سالہ حذیفہ دوسری جماعت کا طالب علم  جبکہ سات بہن بھائیوں میں دوسرے نمبر پر تھا ۔