Tuesday, December 7, 2021
English News آج کا اخبار براہراست نشریات(UK) براہراست ٹی وی
English News آج کا اخبار
براہراست نشریات(UK) براہراست ٹی وی

ملتان انتخابی عذرداری کیس ، ٹربیونل کے فیصلے کیخلاف درخواست خارج

ملتان انتخابی عذرداری کیس ، ٹربیونل کے فیصلے کیخلاف درخواست خارج
January 26, 2018

اسلام آباد (92 نیوز) سپریم کورٹ نے کنٹونمنٹ بورڈ ملتان انتخابی عذرداری کیس میں ٹربیونل کے فیصلے کےخلاف درخواست خارج کر دی ۔
چیف جسٹس میاں ثاقب نثار کی سربراہی میں 3 رکنی بنچ نے کنٹونمنٹ بورڈ ملتان کی انتخابی عذرداری کیس کی سماعت کی ۔
درخواست گزار منتخب چیئرمین ہمایوں اکبر کے وکیل نے دلائل دیئے کہ ٹربیونل نے بینک اکاﺅنٹ نہ بتانے پر 99 ایف کے تحت نااہل کیا ۔ فیصلے سے موکل الیکشن کیلئے تاحیات نااہل ہو گئے ۔
اس پر جسٹس اعجاز الاحسن نے کہا کہ ٹربیونل نے الیکشن کالعدم قرار دیا تھا ۔ آپ کے موکل کو نہیں ۔
ادھر جسٹس عمر عطاء بندیال نے ریمارکس دیئے کہ آرٹیکل 62 ون ایف اور روپا قانون کے 99 ایف کے اطلاق میں فرق ہے ۔
چیف جسٹس نے ہمایوں اکبر کے وکیل سے استفسار کیا کہ دوبارہ الیکشن لڑنے پر قدغن کہاں ہے؟؟ ۔ آپ نے اپنے اکاﺅنٹ میں پڑے 37 لاکھ روپے ظاہر نہیں کئے ۔ انہوں نے کہا کہ نواز شریف کے مقدمے میں کہہ دیا کہ اثاثہ چھپانا بد دیانتی ہے ۔ عدالت نے افتخار چیمہ کا الیکشن بھی 99 ایف کے تحت کالعدم قرار دیا تھا ۔ افتخار چیمہ ضمنی الیکشن میں لڑ کر دوبارہ رکن منتخب ہو گئے ۔
آرٹیکل 62 ون ایف کی نااہلی ایک سال کے لئے ہو گی ، 5 سال یا پھرتاحیات ہو گی ۔ اسی حوالے سے لارجر بینچ 30 جنوری سے سماعت کر رہا ہے ۔
عدالت نے ٹربیونل کے فیصلے کے خلاف ہمایوں اکبر کی درخواست خارج کرتے ہوئے کیس نمٹا دیا ۔