Sunday, October 2, 2022

لاہور، ٹیچر کے تشدد سے چھٹی جماعت کی طالبہ کا بایاں بازو ٹوٹ گیا

لاہور، ٹیچر کے تشدد سے چھٹی جماعت کی طالبہ کا بایاں بازو ٹوٹ گیا
لاہور ( 92 نیوز ) لاہور کے علاقہ شاہدرہ میں ٹیچر کے تشدد سے چھٹی  جماعت کی طالبہ کابایاں بازو ٹوٹ گیا، والدنے دباؤمیں آکر صلح کرلی ۔ 92 نیوز کی ٹیم پہنچی تو پرنسپل پچھلے دروازے سے چلتی بنیں ۔ شاہدرہ میں اسکول ٹیچرنے طالبہ کوبولنے کی ایسی سزادی کہ اس کابازودوجگہ سے فریکچرہوگیا ، محنت کش نصیرحسین کی 12 سالہ بیٹی   ایمان کوایک بارمارنے پرٹیچر کی تسلی نہ ہوئی تو اس نے اس پرکئی بار تشددکیا۔ بعد میں ایکسرے کرانے پر انکشاف ہوا کہ بازودوجگہ سے ٹوٹ گیااور انگلیاں بھی ٹیڑھی ہوچکی ہیں ،بچی کے والد نصیرحسین کا کہنا ہے کہ اسکول انتظامیہ اور محلے داروں نے دباو ڈال کر صلح نامے پر دستخط کروائے۔ اسکول کی پرنسپل نے 92 نیوز کی ٹیم کو نہ صرف مؤقف دینے سے انکارکردیا بلکہ تشددکرنے والی ٹیچرسے بھی نہ ملوایا اورعقبی دروازے سے چلتی بنیں۔