Saturday, February 4, 2023

لاہور میں بھی درندگی کی انتہا، لوہاری گیٹ میں نو سال کی عائشہ زیادتی کے قتل

لاہور میں بھی درندگی کی انتہا، لوہاری گیٹ میں نو سال کی عائشہ زیادتی کے قتل
لاہور (92 نیوز) لوہاری گیٹ کے علاقہ پیر بھولےوالی میں 9سالہ بچی کو زیادتی کے بعد قتل کر دیا گیا ، پولیس نے بچی کی خالہ اور ماموں کو حراست میں لے لیا۔ واقعہ میں قریبی رشتہ دار ملوث ہونے کا خدشہ ہے، لوہاری گیٹ کے علاقہ محلہ شیخاں کی رہائشی ننھی عائشہ کو تشویشناک حالت میں اسپتال لے جایا گیا جہاں وہ کچھ دیر زیر علاج رہنے کے بعد دم توڑ گئی ۔ اہلخانہ نے پہلے تو واقع کو دبانے کی کوشش کی اور لاش کو مردہ خانے منتقل کر دیا گیا۔ پولیس نے شک پڑنے پر بچی کے ماموں اور ایک رشتہ دار نواب کو حراست میں لے لیا۔ پولیس اور فرانزک اہلکاروں نے جائے وقوعہ سے شواہد اکھٹے کیے جسکو فرانزک لیب میں بھجوا دیا گیا ہے۔۔ ایس پی سٹی معاذ ظفر نے بھی جائے وقوعہ کا دورہ کیا، ان کا کہنا ہے کہ ابتدائی پوسٹمارٹم رپورٹ میں یہ بات سامنے آئی ہے کہ بچی کو زیادتی کے بعد گلے میں پھندا ڈال کر قتل کیا گیا۔ بچی کے مامو ں کا کہنا ہے کہ انہیں اطلاع ملی کہ عائشہ کی حالت نازک ہے جب  اسپتال پہنچا تو بچی ہلاک ہو چکی تھی بچی کیساتھ کیا ہوا کس نے زیادتی کی  کچھ پتہ نہیں ۔ بچی کی والدہ فردوس کو کچھ عرصہ قبل طلاق ہوگئی تھی ،جس کے بعد سے خاتون اپنے بھائیوں کے پاس رہ رہی تھی،بچی کی والدہ اس وقت عمرہ پر ہیں۔ تھانہ لوہاری گیٹ میں بچی کے والد جمیل کی مدعیت میں نامعلوم ملزموں کے خلاف قتل کامقدمہ درج کرلیا گیا۔