Thursday, January 20, 2022
براہراست ٹی وی براہراست نشریات(UK) آج کا اخبار English News
English News آج کا اخبار
براہراست ٹی وی براہراست نشریات(UK)

قومی اسمبلی ،اسدعمراور شہبازشریف میں اپنی اپنی حکومت کی کارکردگی پر مقابلہ

قومی اسمبلی ،اسدعمراور شہبازشریف میں اپنی اپنی حکومت کی کارکردگی پر مقابلہ
October 3, 2018
اسلام آباد ( 92 نیوز) قومی اسمبلی میں وزیرخزانہ اور اپوزیشن لیڈر شہبازشریف کے درمیان موجودہ اور سابق حکومت کی کارکردگی کے حوالے سے دلچسپ مکالمہ ہوا ۔  اپوزیشن لیڈر نے ضمنی بجٹ پر وضاحتوں کو کھسیانی بلی کھمبا نوچے کی مثال قرار دیا تو وزیرخزانہ  نے جواب میں شیر ہی کو بلی قرار دے دیا۔ قومی اسمبلی میں ترمیمی فنانس بل کی منظوری کے بعد وزیرخزانہ اسد عمر اور اپوزیشن لیڈر شہبازشریف کے درمیان مختلف معاملات پر دلچسپ مکالمہ ہوا، دونوں نے ایک دوسرے کو چاروں شانے چت کرنے کی بھرپور کوشش کی ۔ شہبازشریف  نے دوران اجلاس اپنے سستے منصوبوں کا ذکر جس پر وزیرخزانہ اسد عمر کے تعجب کی انتہا نہ رہی  اور انہوں نے ہاتھ سر پر دے مارے ۔ وزیرخزانہ نے کہا کہ اب نہ دبئی میں محل بنیں گے  نہ لندن میں جائیداد اور نہ سوئٹزر لینڈ میں اکاؤنٹ کھلیں گے، بلکہ قوم کا پیسہ قوم پر خرچ ہوگا ۔ اپوزیشن لیڈر نے کہا کہ خیبرپختونخوا میں پی ٹی آئی کی حکومت نے پانچ سال کے دوران منفی چھ میگاواٹ بجلی پیدا کی، ٹرانسمیشن لائن میں کمی ہے تو اسے پورا کرنا چاہئے ۔ وزیرخزانہ اسدعمر نے شہبازشریف کے لوڈشیڈنگ ختم کرنے کے دعوے پر کہا کہ اگر ان کے ذہن میں صوابی، نوشہرہ، چارسدہ، مالاکنڈ، چاغی، گوادر، ڈی آئی خان، کوئٹہ اور نوشکی پاکستان میں نہیں تو لوڈشیڈنگ ختم کرنے کا دعویٰ مان لیتے ہیں۔ شہبازشریف نے ضمنی بجٹ پر حکومتی وضاحتوں کو کھسیانی بلی کھمبا نوچے کی مثال قرار دیا۔ وزیرخزانہ اسدعمر نے کہا کہ حیران تھا کہ بجٹ تقریر میں بلی کا ذکر کہاں سے آیا، کیونکہ شیر سکڑ کر بلی کے برابر رہ گیا ہے، اس لئے لیڈر آف اپوزیشن نے بلی کی بات کی۔ دونوں رہنماؤں کے درمیان دلچسپ مکالمے نے قومی اسمبلی کے اجلاس کو دلچسپی سے بھرپور بنا دیا، تاہم دیکھنا یہ ہے کہ بات مکالموں تک ہی رہے گی یا عوام کیلئے بھی کچھ ہوگا، اس کا جواب آنے والا وقت بتائے گا۔