Sunday, October 2, 2022

قصور میں عدلیہ مخالف ریلی، لیگی رہنما شیخ وسیم سمیت 4 ملزموں کو سزا سنا دی گئی

قصور میں عدلیہ مخالف ریلی، لیگی رہنما شیخ وسیم سمیت 4 ملزموں کو سزا سنا دی گئی
لاہور (92 نیوز) قصور میں عدلیہ مخالف ریلی نکالنے والے سابق ن لیگی ایم این اے اور ایم پی اے اپنے قانونی انجام کو پہنچ گئے ۔ لاہور ہائیکورٹ نے ایم این اے شیخ وسیم سمیت  چار ملزمان کو سزا سنا دی ۔ لاہورہائیکورٹ میں جسٹس مظاہر علی اکبر نقوی کی سربراہی میں 3 رکنی بنچ نے قصور میں عدلیہ مخالف ریلی نکالنے کے معاملے پر سماعت کی۔ فاضل عدالت نے سابق ن لیگی ایم این اے اور شیخ وسیم سمیت  ریلی نکالنے  میں ملوث  چار ملزمان کے خلاف فیصلہ سنا دیا۔ عدالت نے ملزمان احمد لطیف اور سابق ایم این اے شیخ وسیم کو ایک ایک ماہ قید  اور اور ایک ایک لاکھ روپے جرمانہ کی سزا سنا دی ۔ اس کے علاوہ عدم ثبوتوں کی بنیاد پر دو ملزمان ایاز خان اورسابق ایم پی اے نعیم صفدر کو بری کرنے کا حکم جاری کر دیا۔ قبل ازیں اعلیٰ عدلیہ کے خلاف قصور میں نازیبا الفاظ استعمال کرنے والے ملزمان پر مسلم لیگ ن مہربان ہوگئی ۔ نوازشریف کے بیانیے کو تقویت دینے پر وسیم اختر شیخ کو قصور کے حلقہ این اے137سے ٹکٹ جاری کردیا جبکہ نعیم صفدر انصاری کو پی پی 174سے ٹکٹ جاری کر دیا ۔ وسیم اختر شیخ اور نعیم صفدر انصاری نے قصور میں عدلیہ کے خلاف ریلی نکالی تھی ، جس میں انہوں نے اعلیٰ عدلیہ کے خلاف نازیبا زبان استعمال کی۔ قانونی ماہرین کےمطابق عدلیہ مخالف نعرے بازی کرنے والوں کو ٹکٹوں کا اجرا مسلم لیگ ن کا اداروں پر کیچڑ اچھالنے والوں کو نوازنا ہے۔