Friday, January 28, 2022
براہراست ٹی وی براہراست نشریات(UK) آج کا اخبار English News
English News آج کا اخبار
براہراست ٹی وی براہراست نشریات(UK)

عوام کے ٹھکرائے ہوئے لوگ ان سے استعفیٰ مانگ رہے ہیں : نوازشریف

عوام کے ٹھکرائے ہوئے لوگ ان سے استعفیٰ مانگ رہے ہیں : نوازشریف
July 19, 2017

 

سیالکوٹ (92نیوز)وزیراعظم میاں نوازشریف نے کہا ہے کہ سمجھ نہیں آ رہی کہ کرپشن کب اور کہاں ہوئی ۔ عوام کے ٹھکرائے ہوئے لوگ اُن سے استعفیٰ مانگ رہے ہیں ۔ اُن کی حکومت کو کبھی مدت پوری نہیں کرنے دی گئی اب تیسری بار ہلہ بولا جا رہا ہے ۔ ایک پائی کی کرپشن کا بھی داغ نہیں ۔

تفصیلات کےمطابق وزیراعظم میاں نوازشریف پہنچے سیالکوٹ جہاں ایوان صنعت و تجارت میں تاجروں سے خطاب کے دوران سیاسی مخالفین کو آڑے ہاتھوں لیا اور کہا کہ عوام کے بار بار ٹھکرائے ہوئے لوگ اُن سے مستعفی ہونے کا کہہ رہے ہیں۔ وزیراعظم میاں نوازشریف نے کہا کہ جس کرپشن کا چار سو شور ہے سمجھ نہیں آ رہی یہ کرپشن کب اور کہاں ہوئی ۔   وزیراعظم نے واضح کہا  کہ اُن کی حکومت کو کبھی مدت پوری نہیں کرنے دی گئی اب تیسرے باری ہلہ بولا جا رہاہے ۔ میاں نوازشریف نے کہا کہ احتساب کے نام پر تماشا لگانے والوں کا گریبان کون پکڑے گا؟ اُن پر ایک پائی کرپشن کا داغ نہیں۔

وزیراعظم میاں نوازشریف نے کہا کہ سی پیک کو ناکام بنانے کی کوشش کی جا رہی ہے ۔ ملک میں منفی سیاست نہ کی جاتی تو آج پاکستان ترقی کی بلندیوں پر ہوتا ۔وزیراعظم نے مخالفین کو واضح پیغام دیا کہ جتنی مرضی الزام تراشی کر لیں ان کو عوام پھر مسترد کریں گے۔

 

 

دوسری طرف پاناما ہنگامے کے فائنل راؤنڈ میں وزیراعظم  نوازشریف نے جے آئی ٹی رپورٹ کی سماعت کے بعد پہلی بار عوامی جلسے سے خطاب کرتے ہوئے شکوے کئے  اور مخالفین پر لفظی باؤنسرزبھی کرائے۔ کہتے ہیں احتساب کرو مگر بتاؤ الزام کیا ہے؟ہماری3نسلوں کا احتساب ہو رہا ہے۔۔احتساب کی فکر نہیں، کل دوسروں کا بھی ہوگا۔ہمیں لوٹ کر ہم سے ہی منی ٹریل کا پوچھتے ہیں وزیراعظم نے غالب کے شعر کا احوال بیان کرتے ہوئے کہا کہ کعبے کس منہ سے جاؤ گے غالب، شرم تم کومگر نہیں آتی۔