Friday, January 21, 2022
براہراست ٹی وی براہراست نشریات(UK) آج کا اخبار English News
English News آج کا اخبار
براہراست ٹی وی براہراست نشریات(UK)

صدر عارف علوی نے پروٹیکشن آف جرنلسٹس اینڈ میڈیا پروفیشنلز ایکٹ دوہزار اکیس پر دستخط کر دیئے

صدر عارف علوی نے پروٹیکشن آف جرنلسٹس اینڈ میڈیا پروفیشنلز ایکٹ دوہزار اکیس پر دستخط کر دیئے
December 1, 2021 ویب ڈیسک

اسلام آباد (92 نیوز) صدرمملکت ڈاکٹر عارف علوی نے پروٹیکشن آف جرنلسٹس اینڈ میڈیا پروفیشنلز ایکٹ دوہزار اکیس پر دستخط کر دیئے۔

پروٹیکشن آف جرنلسٹس اینڈ میڈیا پروفیشنلز ایکٹ دوہزار اکیس پر دستخط کی تقریب ہوئی۔ وفاقی وزیر اطلاعات فوادچودھری کا کہنا ہے میڈیا پروفیشنلز ایکٹ 2021ء کے تحت پہلی مرتبہ پاکستان میں ورکنگ جرنلسٹس کو وہ حقوق فراہم کئے ہیں جو فرسٹ ورلڈ کے صحافیوں کو دستیاب ہیں۔ میڈیا پروفیشنلز ایکٹ 2021ء کا کریڈٹ وفاقی وزیر انسانی حقوق ڈاکٹر شیریں مزاری کو جاتا ہے۔ ایکٹ کی تیاری میں صحافی تنظیموں سمیت تمام صحافتی گروپوں کے ساتھ مشاورت کی گئی۔ حکومت اور وزارت اطلاعات کا فرض ہے کہ وہ ورکنگ جرنلسٹس کے پیچھے کھڑی ہوں۔

چوہدری فواد حسین بولے میڈیا پروفیشنلز ایکٹ میں ورکنگ جرنلسٹس کی ملازمت کو بھی تحفظ دیا گیا ہے۔ ہم پہلی مرتبہ صحافیوں کے لئے ایک آزاد کمیشن لائے ہیں جو شکایات کا 14 دن کے اندر فیصلہ کرے گا۔ اس ایکٹ میں ورکنگ جرنلسٹس کو مالکان اور حکومتی افسران سے بھی تحفظ فراہم کیا گیا ہے۔ اس قانون کے ذریعے ہم نے ایک ایسا ماحول تشکیل دینے کی کوشش کی ہے کہ صحافیوں کو فرسٹ ورلڈ کے صحافیوں کی طرز پر تحفظ فراہم کیا جا سکے۔ اس ایکٹ کے تحت صحافی کی ایک جامع تعریف کرنے کی کوشش کی گئی ہے۔ اس کا فائدہ ان ورکنگ جرنلسٹس کو ہو گا، جو واقعی کام کر رہے ہیں۔

وزیرانسانی حقوق شیریں مزاری بولیں بل بنانے میں صحافتی تنظیموں نے تعاون کیا۔ پہلی بار صحافیوں کے لیے آزادانہ کمیشن بنے گا۔ بل میں تمام میڈیا ورکرز کے تحفظ کو یقینی بنایا ہے ۔ جرنلسٹ کی ویلفئر بھی موجودہ بل میں شامل ہے۔ میڈیا ورکرز کو فیلڈ میں بھیجنے سے قبل تحفظ یقینی بنانا ہو گی ۔ میڈیا ہاؤسز ورکرز کو ٹریننگ دینے کے پابند ہونگے۔ کمیشن آزاد ہو گا۔ صحافی بھی شامل ہونگے ۔ وزارت اطلاعات بھی کمیشن میں شامل ہو گی۔ سارے بل میں کوئی ایسی شق نہیں جس پر بحث ہو سکے ۔ پروٹیکشن اور سورس کو بھی تحفظ دیا گیا ہے۔