Tuesday, October 4, 2022

سندھ : چار برس قبل کئی گئیں 293 اساتذہ کی غیرقانونی ترقیاں منسوخ

سندھ : چار برس قبل کئی گئیں 293 اساتذہ کی غیرقانونی ترقیاں منسوخ
کراچی(92نیوز)محکمہ تعلیم سندھ کو4سال بعدہوش آہی گیا،2011میں ہونےوالی293اساتذہ کی غیر قانونی ترقیاں منسوخ کردی گئیں۔ تفصیلات کےمطابق  محکمہ تعلیم سندھ کا کارنامہ اندھیرنگری چوپٹ راج کی ایک اورمثال۔ چارسال بعدفرض کی ادائیگی کاخیال آہی گیا۔ سیکرٹری تعلیم نےدوہزارگیارہ میں ہونےوالی دوسوتیرانوےاساتذہ کی غیرقانونی ترقیاں منسوخ کردیں۔ سیکرٹری تعلیم فضل اللہ پیچوہوکےنوٹی فکیشن پرغیرقانونی ترقیاں پانےوالےقمبرشہدادکوٹ کےاساتذہ کوہائی اسکول ٹیچرسےایک بارپھرپرائمری اسکول ٹیچراورجونئیراسکول ٹیچربنادیاگیا۔ سیکرٹری تعلیم اچھاقدم اٹھاکربھی قانون کےساتھ۔۔"ہاتھ" کرگئے، سیکرٹری صاحب نےاساتذہ کی تنزلی توکردی لیکن  بھاری رشوت لےکراساتذہ کوترقیاں دینےوالےافسران کوبچالیا۔