Sunday, October 2, 2022

سندھ میں اوپن ٹینڈر کے بغیر نئے ٹھیکوں پر پابندی

سندھ میں اوپن ٹینڈر کے بغیر نئے ٹھیکوں پر پابندی
کراچی (92نیوز) سندھ ہائیکورٹ نے بنا اوپن ٹینڈر ٹھیکے دینے پر پابندی لگاتے ہوئے حکومت سندھ سے 23دسمبر تک ریکارڈ طلب کر لیا۔ تفصیلات کے مطابق درخواست گزار نے سندھ ہائیکورٹ کو بتایا کہ دوہزار تیرہ اور دوہزار چودہ میں سکھر اور خیرپور میں دو ارب کے غیرقانونی ٹینڈرز جاری کیے گئے۔ عدالت نے ریمارکس دیے کہ پورا سندھ تباہ کر دیا گیا‘ ایک سڑک بھی سلامت نہیں۔ ایک رپورٹ میں بتایا گیا کہ کروڑوں روپے کی مٹی ڈلوائی گئی۔ اگر ایسا ہوتا تو کوئی دیہات پانی کی نذر نہ ہوتا۔ عدالت نے بنا اوپن ٹینڈر ٹھیکوں پر پابندی لگاتے ہوئے سندھ حکومت سے تئیس دسمبر تک تمام تر ریکارڈ طلب کر لیا۔