Tuesday, November 30, 2021
English News آج کا اخبار براہراست نشریات(UK) براہراست ٹی وی
English News آج کا اخبار
براہراست نشریات(UK) براہراست ٹی وی

سندھ اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر کا عہدہ تین اتحادی جماعتوں میں ہاٹ کیک بن گیا

سندھ اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر کا عہدہ تین اتحادی جماعتوں میں ہاٹ کیک بن گیا
August 8, 2018
کراچی (92 نیوز) سندھ اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر کا عہدہ تین اتحادی جماعتوں میں ہاٹ کیک بن گیا۔ پی ٹی آئی کی اپنا امیدوار لانےکی سرتوڑ کوشش کر رہی ہے جب کہ ایم کیوایم جی ڈی اے کو ساتھ ملانے کے لیے متحرک ہے ، دوسری جانب کھلاڑیوں اور پتنگ والوں میں پھر دراڑ پڑنے کا امکان نظر آرہا ہے  اور ایک عہدہ دونوں میں تقسیم کا فارمولہ بھی زیر غور ہے۔ مرکز میں اتحادی پی ٹی آئی ایم کیوایم اور جی ڈی اے سندھ اسمبلی میں الگ الگ نظر آتی ہیں ، پی ٹی آئی 23 جنرل اور 7 مخصوص نشستوں کے ساتھ بڑی اپوزیشن جماعت ہے ۔ ایم کیوایم کے پاس سندھ اسمبلی میں 21 کا ہندسہ ہے جب کہ جی ڈی اے 13 ارکان پر مشتمل پارلیمانی پارٹی ہوگی۔ اپوزیشن لیڈر کے لیے اکثریت ثابت کرنے والی جماعت حقدار ٹھہرے گی ، تبدیلی کے موسم میں نئے پاکستان کے غیر فطری اتحادی ایم کیوایم پی ٹی آئیاپوزیشن لیڈر اپنا لانے کے لیے متحرک ہیں۔ پی ٹی آئی میں خرم شیرزمان ، حلیم عادل اور فردوس شمیم نقوی اپوزیشن لیڈر بننے کی دوڑ میں شامل ہیں ۔ ایم کیوایم اور جی ڈی اے مل جائیں تو تعداد 34 بن جاتی ہے جس کیلئے ایم کیوایم نے جی ڈی اے سے رابطہ بھی کرلیا ہے ،  ایم ایم اے اور تحریک لبیک کے 3 ارکان اپوزیشن میں بیٹھتے ہیں تو سندھ اسمبلی میں اپوزیشن کی تعداد67 ہوجائے گی کپتان کے سینئر کھلاڑیوں اور ایم کیوایم کی خواہش ہے کہ لڑائی کے بجائے اپوزیشن لیڈر کے لیے پہلے ہم پھر تم کا فارمولہ طے پاجائے یعنی اپوزیشن لیڈر کے لیے اڑھائی اڑھائی سال کی مدت مقرر کرلی جائے۔ حکومتی جماعت کی طرح اپوزیشن کی صفوں میں بھی پارلیمانی عہدوں کے حصول کی جنگ تیز تر ہے ،کون کیا بنے گا اور کیسے بنے گا جلد اصل صورتحال سامنے آجائے گی۔