Friday, January 28, 2022
براہراست ٹی وی براہراست نشریات(UK) آج کا اخبار English News
English News آج کا اخبار
براہراست ٹی وی براہراست نشریات(UK)

سرکاری دوروں کی آڑ میں ہزاروں افراد بیرون ملک بھیجنے کا انکشاف

سرکاری دوروں کی آڑ میں ہزاروں افراد بیرون ملک بھیجنے کا انکشاف
February 10, 2019
اسلام آباد ( 92 نیوز ) سابق حکومتوں میں سرکاری دوروں کی آڑ میں ہزاروں افراد کو بیرون ممالک بھیجنے کا انکشاف ہوا ہے ، ایک سابق صوبائی وزیر نے متعدد افراد کو برطانیہ بھیجا، سابق وزیر نے خود برطانوی شہریت کی درخواست بھی دی تھی۔ سابقہ ادوار میں حکومتی لیٹر پیڈزپر اور سرکاری دوروں کی آڑ میں کتنے غیر متعلقہ افراد بیرون ملک گئے ، کس طرح ان کے ویزے لگائے جاتے رہے ، کس کس منسٹری کا کون کونسا لیٹر استعمال ہوتا رہا اور کتنی رقوم لیکر بیرون ممالک جایا جاتا رہا، کس وزارت میں سب سے زیادہ یہ کام ہوا اور کس رکن اسمبلی ،بیوروکریٹس اور فارن آفس کے ذمہ دار نے اس میں کیا کیا ،اس حوالے سے اہم ترین انکشافات سامنے آئے ہیں۔ پچھلے تین ادوار میں ہزاروں کے حساب سے ایسے غیر متعلقہ افراد کو بیرون ممالک دوروں کے نام پر ly جانے کا انکشاف ہوا ہے جن کا دور دور تک ان دوروں سے تعلق نہیں بنتا تھا جبکہ تین سابق وزرا،13سابق ارکان اسمبلی ،آٹھ موجودہ ارکان  اسمبلی کے حوالے سے تو یہ سامنے آیا کہ انہوں نے باقاعدہ این جی اوز بنا رکھی تھیں اور ان این جی اوز کے ذریعے بھی سرکاری لیٹرز ساتھ لگا کر کئی افراد کے دوسرے ممالک کے ویزے لگوائے جاتے اور ان سے بھاری رقوم بٹوری جاتیں۔ ایک رپورٹ میں تو یہ بھی انکشافات سامنے آئے ہیں کہ پنجاب کے ایک سابق صوبائی وزیر جس کا تعلق سابق حکومت سے تھا اور شہباز شریف اس سے ناراض بھی رہتے تھے ۔اس سابق وزیر نے باقاعدہ برطانیہ میں نہ صرف متعدد افرد کو پہنچایا بلکہ خود بھی وہاں یہ درخواست دے رکھی ہے کہ وہ پاکستان کے اندر محفوظ نہیں ہے اسے وہاں نیشنلٹی دی جائے ۔متعدد بار وہ اس کیلئے وہاں جا چکا ہے ۔ تین ہزار سے زائد ایسے لیٹرز سامنے آ چکے ہیں جو مختلف سابق وفاقی اور صوبائی حکومتوں کی اہم وزارتوں کی طرف سے مختلف سفارتخانوں کو ویزوں کیلئے لکھے گئے ہیں اور ایسا ریکارڈ بھی اداروں نے حاصل کیا ہے جس میں کئی بیوروکریٹس کے اہلخانہ اور دیگر رشتہ داروں کو بھی بیرون ملک سرکاری کھاتوں اور سرکاری لیٹرز کے ذریعے ویزے دلوائے گئے ہیں اور پھر بیرون ملک دوروں پر ان کو لے جا کر ان کی امیگریشن کی درخواستیں بھی دلوائی گئی ہیں ۔ با وثوق ذرائع کے مطابق آزاد کشمیر حکومت کے حوالے سے بھی کئی لیٹرز سامنے آئے ہیں کہ وہاں کے حکومتی ذمہ داران نے بھی بہتی گنگا میں خوب ہاتھ دھوئے ہیں۔ مصدقہ ذرائع کے مطابق کوریا، برطانیہ ، اور یورپ کے دیگر ممالک کے سب سے زیادہ ویزے لگوانے کیلئے لیٹر جاری ہوئے ہیں،یہ بھی انکشاف ہوا ہے کہ حج کے دوران بطور خدمت گار جانے والے بھی افراد سے نہ صرف رقوم لی گئیں بلکہ ان کو بھی سیاسی سفارشوں پر بھیجا گیا ۔ رپورٹ میں ان اہم سرکاری افراد کے نام بھی لکھے گئے ہیں جو اس میں اہم کردار ادا کرتے رہے ہیں اور کئی وزارتوں کے ایسے لیٹرز جاری کیے گئے ہیں کہ وزیر تک کو اس کا علم نہیں ہوتا تھا ۔ با وثوق ذرائع کا کہنا ہے کہ اس میں کون کون سا ٹریول ایجنٹ استعمال ہوتا رہا اور کس طریقہ سے وہ مختلف افراد کو باہر لیجانے کیلئے ان کے پاس لیکر آتا کتنی رقم اپنے پاس رکھتا اور کتنی رقم ان کو دیتے اور کس کس سفارت خانے کا کون کونسا عملہ ان کے ساتھ ملا ہوتا تھا اس حوالے سے بھی نہ صرف نام لکھے گئے ہیں بلکہ رپورٹ میں ان کے حوالے سے کہا گیا ہے کہ یہ ایک مافیا کی طرح کام کرتے تھے ۔ با وثوق ذرائع کا کہنا ہے کہ اس رپورٹ میں یہ لکھا گیا ہے کہ پانچ سے زائد گروہ ایسے بھی ہیں جو کہ باقاعدہ مختلف فرقوں کے نام پر بھی انسانی سمگلنگ کرتے رہے ہیں۔