Tuesday, January 18, 2022
براہراست ٹی وی براہراست نشریات(UK) آج کا اخبار English News
English News آج کا اخبار
براہراست ٹی وی براہراست نشریات(UK)

سرکاری اشتہارات ازخود نوٹس میں پنجاب حکومت، مسلم لیگ ن اور وزیراعلیٰ کو نوٹس جاری

سرکاری اشتہارات ازخود نوٹس میں پنجاب حکومت، مسلم لیگ ن اور وزیراعلیٰ کو نوٹس جاری
March 8, 2018

لاہور (92 نیوز) سپریم کورٹ لاہور رجسٹری نے سرکاری اشتہارات ازخود نوٹس کیس میں پنجاب حکومت، مسلم لیگ ن، وزیراعلیٰ اور اے پی این ایس کو نوٹس جاری کر دیئے ۔
سپریم کورٹ رجسٹری میں سرکاری اشتہارات از خود نوٹس کیس کی سماعت ہوئی ۔
سماعت میں سیکرٹری انفارمیشن نے عدالت کو بتایا کہ ایک مہینے میں بارہ کروڑ روپے کے اشتہارات دیے گئے جس پرعدالت نے ریمارکس دیئے کہ ایک مہینے کےدوران بارہ کروڑ کے اشتہارات دیئے گئے تو کیا ایک سال میں ڈیرھ ارب روپے کے اشتہارات دیئے گئے؟ ۔
چیف جسٹس نے استفسار کیا کہ اشتہار دینے کے لیے کیا طریقہ کار اختیار کیا گیا؟ ۔
کمرہ عدالت میں وزیر اعلی کی تصویر والا اشتہار دکھایا گیا تو چیف جسٹس نے استفسار کیا کہ اس اشتہار پر کتنی لاگت آئی؟ جس پر بتایا گیا کہ اس اشتہار پر پچپن لاکھ روپے لاگت آئی ۔
چیف جسٹس نے حکم دیا کہ وزیر اعلی پنجاب اس اشتہار کے پچپن لاکھ روپے قومی خزانے میں جمع کرائیں ۔ اس پیسے سے بہت سے لوگوں کی ادویات آجا نی تھیں ۔
عدالت کو بتایا گیا کہ اشتہار کا مقصد پانچ سالہ ترقی بتانا تھا جس پر چیف جسٹس نے ریمارکس دیئے کہ پچپن لاکھ اشتہار پر خرچ کردیئے کیا یہ بادشاہت ہے؟ ۔