Wednesday, September 28, 2022

سانحہ مستونگ کے باعث پورے ملک میں فضا سوگوار رہی

سانحہ مستونگ کے باعث پورے ملک میں فضا سوگوار رہی
کوئٹہ (92 نیوز) سانحہ مستونگ  پر بلوچستان سمیت پورے ملک میں فضا سوگوار رہی ۔ سراج رئیسانی سمیت ایک سو اٹھائیس افراد شہید ہوئے ۔ ہر آنکھ اشکبار رہی ۔ مستونگ میں دکانیں ، بازار اور دفاتر بند ہیں ۔ دھماکے کے زخمی مختلف اسپتالوں میں زیر علاج ہیں ۔ مستونگ سانحے  میں قیمتی انسانی جانوں کی ضیاع پر آج پورے ملک میں سوگ منایا جائے گا۔ سوگ کا اعلان نگران وزیراعظم ناصر الملک نے کیا ہے ۔ بلوچستان عوامی پارٹی  نے تین روز  اور بلوچستان حکومت نے دو روزہ سوگ کا اعلان کیا ہے ۔ ادھر لیویز حکام کے مطابق مستونگ خود کش حملے کا مقدمہ نائب تحصیلدار مستونگ کی مدعیت میں درج کر لیا گیا ہے ۔ مقدمے میں دہشت گردی ، قتل ، اور اقدام قتل کی دفعات شامل کی گئی ہیں ۔ مستونگ دھماکے میں شہید ہونے والے سراج رئیسانی کی تدفین کر دی گئی ۔ نماز جنازہ میں آرمی چیف اور سیاسی رہنماؤں نے شرکت کی ۔ سراج رئیسانی کی قبر پر آرمی چیف اور آئی جی ایف سی بلوچستان کی جانب سے پھول بھی چڑھائے گئے۔ آرمی چیف نے رئیسانی فیملی سے تعزیت کی اور کہا کہ شہید رئیسانی پاکستان کے سپاہی تھے، ہم ایک محب وطن پاکستانی سے محروم ہو گئے۔