Friday, January 28, 2022
براہراست ٹی وی براہراست نشریات(UK) آج کا اخبار English News
English News آج کا اخبار
براہراست ٹی وی براہراست نشریات(UK)

سانحہ بلدیہ کیس، سابق تفتیشی افسر جہانزیب عدالت میں پیش، ہائی پروفائل کیس میں لمبی تاریخ نہیں دے سکتے: جج کے ریمارکس

سانحہ بلدیہ کیس، سابق تفتیشی افسر جہانزیب عدالت میں پیش، ہائی پروفائل کیس میں لمبی تاریخ نہیں دے سکتے: جج کے ریمارکس
April 9, 2016
کراچی (نائنٹی ٹو نیوز) ایڈیشنل ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج کی عدالت نے سانحہ بلدیہ کیس میں محکمہ داخلہ سندھ سے مقدمے کی حتمی رپورٹ اور نئی ایف آئی ار کی تفصیلات پیش نہ کرنے پر برہمی کا اظہار کیا۔ کیس کی سماعت دو مئی تک ملتوی کر دی گئی۔ کراچی کی مقامی عدالت میں سانحہ بلدیہ کیس کی سماعت وکلا کی ہڑتال کے باعث جج کے چیمبر میں ہوئی۔ مقدمے میں ملوث ملزم اسپیشل پبلک پراسیکیوٹر اور سابق تفتیشی افسر جہانزیب پیش ہوئے۔ عدالت نے سابق تفتیشی افسر سے استفسار کیا کہ وہ جب بھی عدالت میں آتے ہیں بیمار کیوں پڑ جاتے ہیں جس پر سابق تفتیشی افسر جہانزیب نے عدالت کو بتایا کہ بیماری کی وجہ سے وہ دو سال سے ڈیوٹی ادا نہیں کر رہے ہیں، مجبوری کی بنا پر عدالت میں پیش ہوئے ہیں۔ عدالت نے اپنے ریمارکس میں کہا کہ حساس کیس میں سابق تفتیشی افسر سے کوتاہی ہوئی ہے، نااہل پولیس اہلکار کیسے ڈیوٹی پر موجود ہے۔ سابق تفتیشی افسر انسپکٹر جہانزیب نے عدالت سے درخواست کی کہ بیماری کی وجہ سے وہ ایم کیو ایم کے کارکن منصور کو گرفتار نہیں کر سکتا ہے۔ عدالت ایس ایس پی کو حکم دے جس پر جج نے اپنے ریمارکس میں کہا کہ وہ بھی بیمار ہیں مگر اپنے فرض کی ادائیگی کے لیے عدالت آتے ہیں، ہائی پروفائل کیس میں لمبی تاریخ نہیں دے سکتے۔ عدالت نے اپنے ریمارکس میں کہا کہ میڈیا نے سانحہ بلدیہ کیس کو بہت فالو کیا ہے، اس کا جو کام ہے وہ کر رہا ہے۔ عدالت نے وکیل صفائی سے پوچھا کہ ملزم منصور کہاں ہے؟ وکیل نے بتایا کہ ملزم منصور 90 روز کے لیے رینجرز کی تحویل میں ہے۔ عدالت نے ملزم کی حراست کی دستاویزات عدالت میں پیش کرنے کا حکم دیتے ہوئے ایک بار پھر ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری کر دیئے اور محکمہ داخلہ سندھ سے مقدمے کی حتمی رپورٹ اور نئی ایف آئی ار سے متعلق تفصیلات طلب کرتے ہوئے کیس کی سماعت دو مئی تک ملتوی کردی۔