Friday, January 28, 2022
براہراست ٹی وی براہراست نشریات(UK) آج کا اخبار English News
English News آج کا اخبار
براہراست ٹی وی براہراست نشریات(UK)

داعش نے برلن میں ٹریلر حملے کی ذمہ داری قبول کر لی

داعش نے برلن میں ٹریلر حملے کی ذمہ داری قبول کر لی
December 21, 2016

برلن (ویب ڈیسک) جرمنی کے شہر برلن کی کرسمس مارکیٹ میں ٹریلر سے لوگوں کو کچلنے کے الزام میں گرفتار مشتبہ پاکستانی کو رہا کردیا گیا۔ حملہ آور تاحال فرار ہے۔ داعش نے حملے کی ذمہ داری قبول کر لی۔ لندن، فرانس،اٹلی اور جرمنی میں کرسمس اور نئے سال کی تقریبات کے لئے سکیورٹی سخت کر دی گئی۔

تفصیلات کے مطابق برلن میں کرسمس مارکیٹ پر ٹریلر سے حملے کے الزام میں گرفتار پاکستانی کو رہا کر دیا گیا ہے۔ جرمن استغاثہ کا کہنا ہے کہ گرفتار شخص کے خلاف مقدمہ چلانے کے لیے ثبوت نہیں۔ رہا کیے گئے پاکستانی کا نام نوید ہے جو رواں برس پاکستان سے جرمنی آیا تھا۔ پولیس نے مشتبہ شخص کو جائے وقوعہ سے دو کلومیٹر دور ایک پارک سے حراست میں لیا تھا۔

اس سے قبل جرمنی کی وزارت داخلہ کا کہنا ہے کہ زیرحراست پاکستانی نے حملے میں ملوث ہونے سے انکار کیا تھا۔ برلن پولیس کے مطابق حملے میں ہلاک ہونے والے چھ افراد کی شناخت ہوگئی ہے جو جرمن شہری تھے۔ زخمی ہونے والے افراد میں سے چوبیس کو ابتدائی طبی امداد کے بعد اسپتال سے فارغ کر دیا گیا ہے۔

پولیس کا کہنا ہے کہ ٹرک کی نمبر پلیٹ پولینڈ کی تھی جو پولینڈ کی ایک ڈلیوری سروس کمپنی کا ملکیت ہے۔ ٹرک کی سیٹ پر ایک پولش شہری کی لاش ملی ہے لیکن پولیس کو شبہ ہے کہ ٹرک چلانے والا یہ شخص نہیں تھا۔ وہ اس ٹریلر کا رجسٹرڈ ڈرائیور تھا جسے ٹریلر چھیننے کے دوران گولی مار کرہلاک کیا گیا۔

ادھر جرمن چانسلر ا نجیلا مرکل نے حملے میں ملوث افراد کو سخت سزا دینے کے عزم کا اظہار کیا ہے۔ برلن میں حملے کے بعد، لندن، فرانس، اٹلی اور جرمنی کے مختلف شہروں میں مارکیٹوں کی سکیورٹی میں اضافہ کر دیا گیا ہے۔