Sunday, September 25, 2022

ختم نبوت تحریک شروع ہوئی تو حکومت کا ٹھہرنا مشکل ہوجائیگا، خفیہ رپورٹ

ختم نبوت تحریک شروع ہوئی تو حکومت کا ٹھہرنا مشکل ہوجائیگا، خفیہ رپورٹ

لاہور ( 92 نیوز ) رانا ثناءاللہ کا استعفیٰ حکومت کے گلے کی ہڈی بن گیا ۔ پیرآف سیال شریف کو 38 ایم این ایز کی حمایت کا گرین سگنل مل گیا ۔ صوبائی اسمبلی کے 20 فیصد سے زائد ارکان نے بھی حمایت کی یقین دہانی کرادی ۔ خفیہ سول اداروں کی رپورٹس کے مطابق ختم نبوت تحریک اور استعفوں کا سلسلہ شروع ہوا تو حکومت کا ٹھہرنا مشکل ہو جائے گا
روزنامہ 92 کی رپورٹ کے مطابق پیرآف سیال کو اس حمایت کا یقین پنجاب کے گدی نشین ساتھیوں نے کرایا ۔ سرگودھا سے 5 ، جھنگ سے 4 ،راولپنڈی ، چنیوٹ اور خوشاب سے دو دو ، اٹک ، چکوال ، جہلم ، میانوالی اور بھکر سے ایک ایک رکن قومی اسمبلی نے حمایت کا سگنل دے دیا ۔
خانیوال سے 3 ارکان اسمبلی جبکہ فیصل آباد ، گوجرانوالہ ، سیالکوٹ ، اوکاڑہ ، ملتان ، لیہ ، بہاولپور ، سے دو دو ارکان اسمبلی نے حمایت کا یقین دلایا ۔
حافظ آباد ، گجرات، نارووال ، شیخوپورہ ، ساہیوال ، پاکپتن ، وہاڑی مظفر گڑھ ، بہاولنگر اور رحیم یار خان سے ایک ایک رکن اسمبلی نے حمایت کا گرین سگنل دیا ۔
رپورٹ کے مطابق پیرآف سیال شریف اور ان کے ساتھیوں کی جانب سے حمایت کے پہلے حصے کا اعلان گوجرانوالہ میں کئے جانے کا امکان ہے ۔
اگر ختم نبوت تحریک کا بھرپور آغاز اور ممبران اسمبلی کے استعفوں کا سلسلہ شروع ہوگیا تو حکمران جماعت کیلئے مشکلات کا سامنا کرنا آسان نہ ہوگا ۔